سعودی ٹرانسپورٹ: عازمین کی نقل و حمل کے ذرائع کے 79 ہزار معائنے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب میں پبلک ٹرانسپورٹ اتھارٹی نے انکشاف کیا ہے کہ اس نے ایک ماہ سے زائد عرصہ قبل حجاج کرام کی مقدس دارالحکومت آمد کے آغاز کے ساتھ ہی ان کے ذرائع نقل و حمل کے 79,000 سے زائد معائنے کیے ہیں۔

’العربیہ‘ کو دیے اپنے بیان میں اتھارٹی نے تصدیق کی کہ ٹرانسپورٹ کے شعبے کے لیے ٹرانسپورٹ سروس فراہم کرنے والوں کی جانب سے اتھارٹی کے تقاضوں کی تعمیل کا تناسب حج کے دوران 91 فیصد تک پہنچ گیا ہے جب کہ سعودی عرب میں جنرل ٹرانسپورٹ اتھارٹی کی کنٹرول آپریشن ٹیمیں مکہ کے داخلی راستوں، ہوائی اڈوں اور ٹرین اسٹیشنوں پر موجود ہیں۔ یہ ٹیمیں اس بات کو یقینی بنانے کے لیے کام کررہی ہیں حجاج کرام اور ان کے سامان کو منتقل کرنےوالی ٹیکسیاں اور بسیں طے شدہ معیارات کی تعمیل کررہی ہیں یا نہیں۔ ٹیمیں ان ٹرانسپورٹ گاڑیوں میں ٹریکنگ ڈیوائس ہونی چاہیے، نقل و حمل کی صفائی، اور رہ نما کی موجودگی اور حجاج کو لے جانے والی ہر بس میں رہ نما کا ہونا ضروری ہے۔

سعودی عرب میں عوامی نقل و حمل کی ترقی حال ہی میں واضح ہو گئی ہے، حالیہ برسوں میں اس شعبے کو ریگولیٹ کرنے والے بہت سے قانون وضع کیے گئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں