حج 1444

300 ملین مسلمانوں تک خطبہ حج کے 20 زبانوں میں ترجمے کی تیاریاں مکمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سعودی عرب میں صدارت عامہ برائے حرمین شریفین نے اس سال حج 1444ھ کے دوران میدان عرفات کی مسجد نمرہ سے خطبہ حج کے ترجمہ کرنے کی تیاریاں مکمل کر لی ہیں۔

منارۃ الحرمین پلیٹ فارم کے تعاون سے دنیا بھر کے تمام مسلمانوں کے لیے یوم عرفات کے خطبہ کا بیک وقت 20 مختلف بین الاقوامی زبانوں میں ترجمہ کیا جائے گا۔

مسجد حرام اور مسجد نبوی کے جنرل صدر شیخ عبدالرحمن السدیس نے تصدیق کی کہ خطبہ حج موجودہ حج سیزن کے لیے آپریشنل پریذیڈنسی پلان کے سب سے نمایاں اور اہم منصوبوں میں سے ہے، جس کے نعرہ (دنیا والوں کے لیے رہنمائی پھیلانا) کے تحت یوم عرفات اور حرمین شریفین کے خطبات کا بیک وقت ترجمہ پیش کیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ "ویژن 2030 کے مطابق ایوان صدر کی طرف سے دیکھی گئی ترقی کی رفتار کو برقرار رکھنے کے لیے ضروری تھا کہ زبانوں اور ترجمے کے ادارے کی سطح کو بلند کیا جائے تاکہ اس کی خدمات سے 300 سے زائد مسلمان فائدہ اٹھائیں۔

اس کے لیے موبائل فون، صدارت عامہ کی ویب سائٹ، اور منارۃ الحرمین پلیٹ فارم پر خطبہ کا ترجمہ کرنے کے لیے وقف ایپلی کیشن کے ذریعے مختلف زبانوں میں اور بڑے پیمانے پر دنیا کے مسلمانوں تک اسلام کا معتدل پیغام پہنچانے کا اہتمام کیا گیا ہے۔"

انہوں نے کہا کہ خطبہ حج کے ترجمے کا مقصد حقیقی اسلامی مذہب کی روشن اور مہذب تصویر کو اجاگر کرنا اور اس کے اعتدال پر مبنی، اقدار اور فضائل کو نمایاں کرنا ہے۔
اور اس بات کو یقینی بنانا کہ اس سچے مذہب کا پیغام جدید تکنیکی ذرائع سے پوری دنیا تک پہنچے۔

اس منصوبے کا ہدف حجاج کرام، تمام مسلمان اور غیر مسلم ہیں جو خطبہ سننے میں دلچسپی اور خواہش رکھتے ہیں۔

ترجمے کا منصوبہ 1439ھ میں (5) زبانوں سے شروع کیا گیا اور اسے دو ڈیجیٹل پلیٹ فارمز اور (5) ایف ایم براڈکاسٹ کے ذریعے نشر کیا گیا۔اس وقت (13) ملین سے زیادہ افراد نے اس سے استفادہ کیا۔

اس کے بعد زبانوں کی تعداد میں اضافہ کے بعد (6) زبانوں میں ترجمہ کیا گیا، اور 6 براڈکاسٹ اسٹیشنوں پر نشر گیا، جس سے اس سال مستفید ہونے والوں کی تعداد تقریباً (16) ملین تک پہنچ گئی۔

سنہ 1443 ہجری میں زبانوں کی تعداد (14) تک بڑھ گئی، اور الیکٹرانک پلیٹ فارمز کی تعداد (4) پلیٹ فارمز تک بڑھا گئی،
اسی طرح تحریری ترجمہ قرآن اور حدیث چینل پر پیش کیا گیا جس سے مستفید ہونے والوں کی تعداد تقریباً (23) ملین تک پہنچ گئی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں