.

امریکی صدارتی امیدوار ووٹروں کے دل جیتنے کے لیے بیگمات سے مدد لینے لگے

مشل کا لباس اور وضع قطع سوشل میڈیا کی توجہ کا مرکز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
انتخابات میں جیت ہر امیدوار کی خواہش ہوتی ہے چنانچہ اس خواہش کی تکمیل کے لیے طرح طرح کے جتن کئے جاتے ہیں۔ امریکا کے کل ہونے والے صدارتی انتخاب میں ڈیموکریٹک پارٹی کے امیدوار باراک اوباما اور ری پبلیکن کے میٹ رومنی اپنی اپنی کامیابی کو یقینی بنانے کے لیے ایڑی چوٹی کا زور لگا رہے ہیں۔ دونوں امیدواروں نے وائٹ ہاؤس پر کمند ڈالنے کے لیے نہ صرف بھاری سرمایہ خرچ کیا ہے بلکہ جیت کے لیے اپنی بیگمات کو بھی بھرپور طریقے سے استعمال کر رہے ہیں۔



العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق دونوں صدارتی امیدواروں کی بیگمات پارٹی جلسوں میں نہایت بیش قیمت زرق برق لباس زیب تن کر کے شرکت کرتی ہیں اور اس طرح اپنی وضع قطع سے لوگوں کے دل جیتنے کی کوششیں کر رہی ہیں۔ خاتون اول مشل اوباما اپنے شوہر نامدار کی صدارتی انتخابات میں دوسری مرتبہ فتح کو یقینی بنانے کے لیے ڈیموکریٹک پارٹی کے اجلاس میں کیا گئیں کہ سوشل میڈیا نے ان کی ظاہری وضع قطع، لباس، طویل ناخن، جوتوں اور سر کے بالوں کی تعریف وتوصیف میں ایک طوفان برپا کر دیا۔

ایک طرف مشل اوباما اپنے شوہر کی انتخابی جیت کے لیے پارٹی جلسے سے خطاب کر رہی تھیں اور دوسری جانب سوشل میڈیا پر ان کی ظاہری شکل وصورت اور آرائش و زیبائش کی تعریف میں ایک طوفان برپا تھا۔ چنانچہ مشل کی چند منٹ کی تقریر کے دوران ان کے ٹیوٹر اکاؤنٹ پر ان کے مداحوں نے 28 ہزار ٹویٹس کر دی تھیں۔ ان میں بیشتر ان کے زیب تن کردہ قیمتی سوٹ، جوتوں، لمبے ناخنوں اور سر کے بالوں کے بارے میں تھیں۔



وائٹ ہاؤس میں منعقدہ جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مشل اوباما بار بار اپنے بازو ہوا میں لہراتیں جس سے ان کی باہیں ننگی ہو جاتی ہیں۔ تقریر کے دوران انہوں نے مشہور عالم امریکی فیشن ڈیزائنرز جائیسون ور تھاکون کا بھی ذکر کیا۔ انہوں نے اپنے حامیوں کی جانب ہاتھ لہراتے ہوئے پہنے ہوئے سوٹ کی جانب اشارہ کیا اور کہا کہ میرا یہ نادر ڈریس ٹرایزی ریس نامی خاتون فیشن ڈیزائنر نے ڈیزائن کیا ہے۔ اس بیش قیمت سوٹ کی قیمت چار سو ڈالرز سے کم ہر گز نہ ہو گی۔



البتہ ری پبلیکن امیدوار میٹ رومنی کی اہلیہ آن رومنی اپنی پارٹی کے جلسوں میں مشل کے لباس سے زیادہ بیش قیمت لباس زیب تن کرتی رہی ہیں۔ جس طرح دونوں بیمگات کی سیاست میں نمایاں فرق ہے، اسی طرح دونوں کے لباس کی کوالٹی، ڈیزائن اور قیمت بھی واضح فرق دکھائی دیا۔



ری پبلیکن پارٹی کے ایک حالیہ جلسے سے خطاب کے دوران آن رومنی کو ایک سرخ رنگ کے قیمتی سوٹ میں دیکھا گیا، جہاں انہوں نے تقریر بھی کی۔ آن رومنی کا سوٹ معروف فیشن ڈیزائنر اوسکار دی لارونٹا کا ڈیزائن کردہ تھا جس کی قیمت کم سے کم دو ہزار ڈالر ہو گی۔