.

شہزادہ محمد بن نایف سعودی عرب کے نئے وزیر داخلہ نامزد

شہزادہ احمد بن عبدالعزیز ذمے داریوں سے سبکدوش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
سعودی عرب کے فرمانروا شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز نے نائب وزیر داخلہ شہزادہ محمد بن نایف کو ترقی دے کر مملکت کا نیا وزیر داخلہ نامزد کیا ہے۔

شہزادہ محمد کا وزیر داخلہ کے عہدے پر تقرر ان کے سوتیلے چچا شہزادہ احمد بن عبدالعزیز کی جگہ کیا گیا ہے۔ شہزادہ احمد نے اس عہدے کی ذمے داریوں سے سبکدوش ہونے کی درخواست کی تھی۔

سعودی عرب کی سرکاری خبر رساں ایجنسی 'ایس پی اے' نے سوموار کو ایک شاہی فرمان نقل کیا ہے جس کے مطابق وزیر داخلہ شہزادہ احمد کو ان کی درخواست پر وزیر داخلہ کے عہدے سے سبکدوش کر دیا گیا ہے اور ان کی جگہ شہزادہ محمد بن نایف کو وزیر داخلہ مقرر کیا گیا ہے۔

شہزادہ محمد سعودی عرب کے سابق وزیر داخلہ اور ولی عہد مرحوم شہزادہ نایف بن عبدالعزیز کے صاحبزادے ہیں۔ شہزادہ نایف سینتیس سال تک (1975ء سے 2012ء تک) سعودی عرب کے وزیر داخلہ رہے تھے۔ جون میں ان کے انتقال کے بعد شہزادہ احمد بن عبدالعزیز کو سعودی عرب کا وزیر داخلہ مقرر کیا گیا تھا۔

شہزادہ نایف کو اکتوبر2011ء میں ان کے بڑے بھائی شہزادہ سلطان بن عبدالعزیز کے انتقال کے بعد سعودی عرب کا ولی عہد مقرر کیا گیا تھا۔مرحوم نے سعودی عرب میں القاعدہ کے جنگجوؤں کا قلع قمع کرنے میں قائدانہ کردار ادا کیا تھا اور ان کا سعودی سکیورٹی فورسز پر مکمل کنٹرول تھا۔