مقتول کرنل قذافی کی خاتون باڈی گارڈ کا قاہرہ میں پُراسرار قتل

زھراء کا ماڈلنگ کی جانب رحجان قتل کا باعث؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

قاہرہ کے سیکیورٹی حکام جنگی بنیادوں پر مقتولہ زھراء البوعیشی کے قتل کا سراغ لگانے کے لیے کوشاں ہیں۔ اب تک کی تحقیقات کے مطابق اس گھناؤنی واردات کا کوئی ٹھوس سبب تو سامنے نہیں آیا ہے۔ سیکیورٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ قتل کا کوئی سیاسی سبب نہیں اور نہ ہی یہ چوری یا ڈاکے میں انتقامی کارروائی لگتی ہے بلکہ یہ ایک فوجداری نوعیت کا کیس ہے۔

اس کا اندازہ اس امر سے لگایا جا سکتا ہے کہ گھر میں تمام قیمتی چیزیں موجود ہیں۔ مکان کے ایک سیکیورٹی گارڈ کا کہنا ہے کہ واقعے سے کچھ دیر قبل مقتولہ کے بھائی اس گھر میں آئے تھے۔ مقتولہ کے بھائی نے سختی سے سیکیورٹی گارڈ کو منع کیا تھا کہ وہ شام پانچ بجے تک اندر داخل نہ ہو اور نہ کسی اور کو آنے دے کیونکہ وہ اس دوران آرام کرے گا۔ بعد ازاں وہ لیبیا روانہ ہو گیا۔

سیکیورٹی گارڈ کے بیان کے مطابق پولیس نے یہ شبہ ظاہر کیا ہے کہ زھراء کے قتل میں اس کا بھائی ہی ملوث ہو سکتا ہے کیونکہ مقتولہ کے اہل خانہ کی جانب سے یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ وہ ماڈلنگ کی طرف رُحجان رکھتی تھی جبکہ اس کا بھائی اسے شو بز میں جانے سے سختی سے منع کرتا رہا ہے۔ دونوں کے درمیان اس معاملے میں سخت اختلافات پائے جاتے رہے ہیں۔

مصری اخبار 'الفجر' کی رپورٹ کے مطابق ضرورت پڑنے پر انٹرپول کے ذریعے مقتولہ کے بھائی کو گرفتار کیا جا سکتا ہے۔ اخبار نے بتایا کہ اس بات کئی شواہد موجود ہیں جن میں قتل کے اشارے مقتولہ کے بھائی کی طرف جاتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں