.

پاؤلا ۔ پیٹریاس لو اسٹوری میں کیدو کا کردار لبنانی نژاد خاتون نے ادا کیا

جیل کیلی کے موسیقار والد امریکا میں ریستوران چلاتے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی سی آئی اے کے سابق چیف جنرل ڈیوڈ پیٹریاس کے ایک خاتون کے ساتھ ناجائز تعلقات عالمی میڈیا میں شہ سرخیوں کا موضوع بنے ہوئے ہیں اور اس اسکینڈل کے کئی پہلو ایک ایک کر کے سامنے آ رہے ہیں۔

ذرائع ابلاغ نے جنرل پیٹریاس اور اس کی مبینہ معشوقہ پاؤلا برڈویل کے 'تعلقات' کا بھانڈہ پھوڑنے والی دوسری خاتون کا بھی کھوج لگا لیا ہے۔ پاؤلا ۔ پیٹریاس لو اسٹوری میں کیدو کا کردار ادا کرنے والی دوسری خاتون لبنانی نژاد جیل کیلی ہیں۔ جیل کے والد لبنان کے خوام خاندان سے تعلق رکھنے والے ایک موسیقار ہیں جو ان دنوں امریکا میں ریستوران چلا رہے ہیں۔



مسسز جیل امریکا میں ایک فوجی اڈے پر سماجی امور کی نگران ہیں لیکن وہ اپنے کام کا کوئی معاوضہ وصول نہیں کرتی ہیں۔ جیل کے جنرل پیٹریاس کے ساتھ تعلقات کی نوعیت تو ابھی سربستہ راز ہے البتہ ان کے مسز پیٹریاس سے دوستانہ مراسم ضرور رہے ہیں۔ عین ممکن ہے کہ انہی مراسم کی بنیاد پر پیٹریاس کی معشوقہ پاؤلا نے اس شبے کا اظہار کیا ہو کہ جیل کیلی بھی ان کے محبوب (جنرل پیٹریاس) کی محبت میں گرفتار ہے، جس کے بعد پاؤلا نے اسے انتباہی ای میل کی تھیں۔



میڈیا رپورٹس کے مطابق جیل کیلی نے وہ تمام ای میلز وفاقی تحقیقاتی ایجنسی 'ایف بی آئی' کے حکام کو فراہم کیں۔ ساتھ ہی امریکی حکام کو پاؤلا کی جانب سے لاحق خطرے سے بھی آگاہ کیا اور ان سے تحفظ طلب کیا۔ ان ای میلز کی بنیاد پر ایف بی آئی نے جنرل ڈیوڈ پیٹریاس اور پاؤلا کے درمیان جاری معاشقے کا سراغ لگانے کے لئے ان کے ای میلز تک رسائی حاصل کی اور تمام راز فاش کر دیا۔



امریکی اخبار 'واشنگٹن پوسٹ' کی رپورٹ کے مطابق جیل کیلی کے سی آئی اے میں کام کرنے کی خبریں بے بنیاد ہیں اور اس کے جنرل پیٹریاس کےساتھ تعلقات بھی غیر واضح ہیں البتہ پاؤلا کی ای میلز سے یہ ضرور ثابت ہوتا ہے کہ وہ جیل کو پیٹریاس کے ساتھ جنسی تعلقات کی راہ میں اپنے لئے خطرہ ضرور سمجھتی تھی۔
العربیہ ڈاٹ نیٹ نے لبنانی نژاد جیل کیلی کے بارے میں امریکی میڈیا میں آنے والی مزید تفصیلات بھی جمع کی ہیں۔ ان معلومات کی روشنی میں یہ بات پایہ ثبوت کو پہنچی کہ کیلی کا اصل نام جیل خوام ہے۔ اس کے والد لبنان کے دارالحکومت بیروت کے قریب جونیۃ شہر کے رہنے والے تھے۔

سن 1970ء کے عشرے میں وہ امریکا منتقل ہو گئے تھے۔ لبنان میں وہ ایک موسیقار کے حوالے سے جانے جاتے تھے البتہ امریکا میں انہوں نے ہوٹلنگ کو اپنا پیشہ بنایا۔ انہوں نے امریکی شہر فلاڈیلفیا میں ’’صحارا‘‘ کے نام سے ایک ریستوران کھولا۔ ان کی صاحبزادی جیل نے بھی اسی شہر میں پرورش پائی اور بیس سال کی عمر میں اس کی ایک امریکی سرجن سکاٹ کیلی کے سے شادی ہو گئی جن سے ان کی تین بیٹیاں ہیں۔سینتیس سالہ جیل کیلی اب اپنے شوہر اور بیٹیوں کے ہمراہ ریاست فلوریڈا کے شہر تامبا میں رہائش پذیر ہیں۔ اس کے بڑے بھائی ڈیوڈ اور جڑواں بہن ناٹالی امریکا میں وکالت کرتے ہیں۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ’فیس بک‘ پر جیل کیلی کے اکاونٹ پر اس کی سات سالہ بیٹی کی بھی تصویر موجود ہے۔ وہیں سے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو یہ معلوم ہوا کہ جیل کے پیٹریاس کے خاندان کے ساتھ مراسم ہیں کیونکہ جیل نے ایک پوسٹ میں کہا ہے کہ وہ کچھ عرصہ قبل پیٹریاس کے اہل خانہ سے ملنے تامبا شہر گئی تھی۔ رپورٹس سے پتہ چلتا ہے کہ جیل لوگوں سے میل جول رکھنے والی خاتون ہیں جبکہ ان کے شوہر ایک لا ابالی سے انسان ہیں۔

خیال رہے کہ جنرل ڈیوڈ پیٹریاس امریکی فوج میں خدمات انجام دینے کے بعد کئی سال سے خفیہ ادارے ’سی آئی اے‘ کے سربراہ کے عہدے پر کام کرتے رہے ہیں۔ اسکینڈل کے منظر عام پر آنے کے بعد انہوں نے نہ صرف اس کی صداقت کا اعتراف کیا بلکہ سی آئی اے کے چیف کے عہدے سے بھی سکبدوش ہو گئے۔ سی آئی اے کی کسی سربراہ کا جنسی اسکینڈل میں ملوث ہونے کا یہ ایک انوکھا واقعہ ہے جس نے امریکی سیاسی اور سیکیورٹی حلقوں میں ہلچل مچا دی ہے۔