.

برطانوی پارلیمنٹ میں باپردہ دوشیزہ کا تاریخی خطاب

سمیعہ کریم یوتھ پارلیمنٹ کی رکن ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مغربی لندن کے علاقے وکنگھم سے تعلق رکھنے والی دوشیزہ سمیعہ کریم نے حجاب پہن کر برطانوی پارلیمنٹ میں خطاب کر کے ایک نئی تاریخ رقم کر دی۔ اخبار 'دی ٹائمز' کے مطابق سولہ برس کی سمیعہ برطانوی پارلیمانی تاریخ کی پہلی خاتون ہیں جنہوں نے حجاب پہن کر پارلیمنٹ کےڈسپیچ باکس سے خطاب کرنے کا اعزاز حاصل کیا۔

برطانوی یوتھ پارلیمنٹ کی رکن سمیعہ کریم بیالوجی، کیمسٹری، میتھ اور تاریخ کی طالبہ ہیں۔ یوتھ پارلیمنٹ نے امسال اپنا سالانہ اجلاس ایوان زیریں کے چیمبر میں منعقد کیا۔ اسی چیمبر میں برطانیہ کے منتخب ارکان پارلیمنٹ اجلاس منعقد کرتے ہیں۔ آنسہ کریم نے 'دی ٹائمز' کو بتایا کہ حجاب پہننا ان کی اپنی چوائس ہے'۔

یاد رہے کہ سمعیہ نے جس ڈسپیچ باکس سے خطاب کیا، اسی مقام سے برطانوی وزراء اور حزب اختلاف کے شیڈو وزیر ہاؤس آف کامنز سے خطاب کرتے ہیں۔

برطانیہ میں جمہوری طریقے سے منتخب ہونے والی یوتھ پارلیمنٹ گیارہ سے اٹھارہ برس کے نوجوانوں پر مشتمل ہوتی ہے۔ یہ منتخب نوجوان اپنی حکومت کے شعبے سے متعلق نوجوانوں کے خیالات فیصلہ ساز اداروں تک پہنچانے میں مدد کرتے ہیں۔