.

سعودی خاتون ماہر تعلیم کو امریکا سے ڈاکٹریٹ کی اعزازی ڈگری

ڈاکٹر سمر السقاف امن کے نوبل انعام کے لیے بھی نامزد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
سعودی عرب میں تعلیم نسواں کے فروغ کے لیے خدمات کے اعتراف میں خاتون سماجی رہنما کو امریکا کی ایک قدیم یونیورسٹی نے ڈاکٹریٹ کی اعزازی ڈگری جاری کی ہے۔ العربیہ ٹی وی کے مطابق سعودی خاتون رہنما ڈاکٹر سمر السقاف کو امریکی ریاست کونٹیکٹ میں قائم ایک قدیم درسگاہ جامعہ سینٹ جوزف کی جانب سے آئندہ برس مئی میں ایک تقریب میں دی جائے گی۔



امریکی یونیورسٹی کی چیئرپرسن ڈاکٹر پامیلا ٹورٹ مین نے سعودی خاتون سمر السقاف کے نام مجوزہ ڈاکٹریٹ کی ڈگری کے بارے میں کہا کہ ’’یونیورسٹی کے اس اقدام کا مقصد تعلیم نسواں کے فروغ میں سرگرم خواتین کی حوصلہ افزائی کرنا اور انہیں مزید بہتر سے بہتر خدمات کی انجام دہی کے قابل بنانا ہے۔ جامعہ سینٹ جوزف ایک قدیم درسگاہ ہے جو خواتین کی تعلیم ہی کے لیے مخصوص ہے۔ سمر السقاف کو اعزازی ڈگری کا اجراء خود ہماری جامعہ کے لیے بھی باعث فخر ہو گا‘‘۔



سعودی سماجی رہ نما سمر السقاف کو جان ھاپنکز اسپتال کی جانب سے آئندہ سال کے امن نوبیل انعام کے لیے بھی نامزد کیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ وہ سعودی عرب کی 100 بااثر خواتین کی فہرست میں بھی شامل ہیں۔



العربیہ سے گفتگو کرتے ہوئے سمر السقاف نے کہا کہ کسی امریکی یونیورسٹی کی طرف سے انہیں تعلیم کے شعبے میں خدمات انجام دینے پر ڈاکٹریٹ کی اعزازی ڈگری کے لیے نامزد کرنا میرے لیے واقعی ایک اعزاز ہے۔ یہ اعزاز دراصل مجھے نہیں بلکہ میری تیس سالہ تعلیمی خدمات کے صلے میں دیا جا رہا ہے۔ میں سمجھتی ہوں کہ امریکی یونیورسٹی نے میرے اکیڈیمک کیرئیر اور اس شعبے میں میری خدمات کا جائزہ لیا ہے اور اس میں میری کاوشوں کے اعتراف میں مجھے اعزازی ڈگری دینے کا اعلان کیا گیا ہے۔



سمر السقاف نے بتایا کہ سعودی عرب پہلا خلیجی اور تیسرا عرب ملک ہے جس کے شہریوں کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ اس کی خواتین اور مردوں کی بڑی تعداد امریکا جیسے ترقی یافتہ ملک میں طب کے شعبے میں خدمات انجام دے رہی ہے۔ اس وقت امریکا میں سعودی عرب کے 1500 ماہرین طب خدمات انجام دے رہے ہیں۔ سعودی عرب میں خواتین کی تعلیم کی راہ میں حائل رکاوٹوں کے بارے میں سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سعودی معاشرے میں خواتین پر اعتماد کی کمی ہے۔ وقت کے ساتھ ساتھ یہ رکاوٹ بھی دور ہو جائے گی۔ خواتین کو مختلف شعبہ ہائے زندگی میں خدمات کی انجام دہی کے زیادہ سے زیادہ مواقع فراہم کئے جانے چاہئیں۔



ایک دوسرے سوال کے جواب میں خاتون سماجی رہنما کا کہنا تھا کہ امریکی یونیورسٹی کی جانب سے اعزازی ڈگری میری شہرت کا موجب نہیں ہو گی کیونکہ علاقائی سطح پر میری خدمات پہلے ہی تسلیم کی جا چکی ہیں۔ میں کئی تعلیمی انجمنوں اور تنظیموں کی سربراہ رہ چکی ہوں۔



خیال رہے کہ ڈاکٹر سمر السقاف سعودی عرب کی شاہ سعود یونیورسٹی سے فارغ التحصیل ہیں۔ انہوں نے یونیورسٹی سے انٹانومی اور امبریالوجی سائنس میں پی ایچ ڈی کی ڈگری لے رکھی ہے۔ ڈاکٹر سمر ایک متحرک ماہر تعلیم اور سماجی رہنما ہیں۔ وہ اس سے قبل بھی کئی خلیجی ملکوں کے تعلیمی اداروں سعودی تنظیموں کی طرف سے اعلیٰ کار کردگی کی درجنوں اسناد وصول کر چکی ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ان کا سی وی بائیس صفحات پر محیط ہے جو ان کی خدمات کا بین ثبوت ہے۔