.

بشار الاسد شام پر کنٹرول کھو رہے ہیں روسی نائب وزیر خارجہ

اپوزیشن کی کامیابی کو نظر انداز نہیں کیا جا سکتا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
روس کےنائب وزیر خارجہ کا کہنا ہے کہ شامی صدر بشار الاسد ملک پر اپنا کنٹرول کھو رہے ہیں اور حزب اختلاف کی کامیابی کو نظر انداز نہیں کیا جا سکتا۔

روس کی سرکاری خبر رساں ایجنسی 'اترتاس' نے جمعرات نائب وزیر خارجہ اور مشرق وسطیٰ کے لیے کریملن کے خصوصی ایلچی میخائل بوگدانوف کا یہ بیان نقل کیا ہے۔ کسی روسی عہدے دار کی جانب سے پہلی مرتبہ یہ اعتراف کیا گیا ہے کہ شامی صدر خونریز خانہ جنگی میں شکست سے دوچار ہو سکتے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ روس شام میں موجود اپنے شہریوں کی بحفاظت ملک واپسی کے لیے کام کر رہا ہے۔ روسی نائب وزیر خارجہ نے مغرب کی ہم نوائی میں بشار الاسد رجیم کے خلاف پابندیوں کی حمایت کا تو کوئی اشارہ نہیں دیا لیکن ان کے بیان سے ظاہر ہے کہ روس نے اب بشار الاسد کی ناگزیر شکست کی صورت میں اپنے موقف پر نظر ثانی شروع کر دی ہے۔

واضح رہے کہ روس اب تک بشار الاسد کو تحفظ مہیا کرتا چلا آ رہا ہے اور اس نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں دو مرتبہ شامی صدر کے خلاف پابندیاں عاید کرنے کے لیے مغربی ممالک کی پیش کردہ قراردادوں کو ویٹو کر دیا تھا۔