.

فرانسی استعمار الجزائر کی مشکلات کا سبب رہا ہے فرانسو اولاند

"استعماری دور کا سارا ریکارڈ الجزائر کے حوالے کیا جائے"

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
فرانسیسی صدر فرانسو اولاند نے کہا ہے وہ یہ بات تسلیم کرتے ہیں کہ فرانسیسی استعمار کے دوران الجیرین شہریوں کو 'مشکلات' کا سامنا رہا ہے۔ فرانسیسی صدر کے اعتراف کے باوجود انہوں نے تیل کی دولت سے مالا مال اور پیرس کے مرکزی تجارتی پارٹنر [الجزائر] سے معافی نہیں مانگی۔

فرانسو اولاند نے دورہ الجزائر کے دوسرے روز الجیرین پارلیمان سے خطاب کرتے ہوئے کہ "الجزائر ظالم اور وحشی استعمار کا نشانہ بنا ہے۔" فرانسیسی صدر کے دورہ الجزائر کا منقصد الجزائر اور فرانس کے درمیان سفارتی اور اقتصادی تعلقات کو مضبوط بنانا ہے۔

مسٹر اولاند کا کہنا تھا کہ "میں استعماری دور میں الجیرین عوام کو درپیش مشکلات کا اعتراف کرتا ہوں۔" انہوں نے کہا کہ استعماری چرکوں کے داغ الجیرین عوام کے ذہنوں میں راسخ رہیں گے۔ انہوں نے کہا کہ 1945ء میں فرانس کے جرائم کا پردہ چاک کیا جانا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ ہماری ذمہ داری ہے کہ استعماری دور کا ریکارڈ الجیرین حکام کے حوالے کیا جائے۔ انہوں نے اس بات کی ضرورت پر زور کہ فرانس اور الجزائر کو آگے بڑھنے کے لئے تمام مشکلات پر قابو پانا چاہئے۔ مسٹر اولاند نے کہا کہ مغربی صحارا کا مسئلہ سیکیورٹی کونسل اور اقوام متحدہ کے فریم ورک میں حال کیا جانا چاہئے۔