.

ایران کے دو سیٹلائیٹ ٹی وی چینلز کی نشریات بند

تہران کا کمپنی کے خلاف قانونی چارہ جوئی کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
ایران کے انگریزی زبان میں نشریات پیش کرنے والے 'پریس ٹی وی' اور فارسی میں نشریات پیش کرنے والے 'ہسپان ٹی وی' کی نشریات ہفتے کے روز بند کر دی گئیں۔

اس امر کا انکشاف دونوں چینلز ہسپانوی کی میڈیا پرو کمپنی نے کیا ہے۔ میڈیا پرو کے بہ قول ہسپانیہ کے 'ہیپاسیٹ' مصنوعی سیارے کے ذریعے پریس ٹی وی اور ہسپان ٹی وی کی نشریات پیش کی جاتی تھیں۔

ایرانی خبر رساں ایجنسی 'مھر' کے مطابق یہ اقدام ایرانی ریڈیو اور براڈکاسٹنگ سروس کے سربراہ عزاللہ ضرغامی پر عاید یورپی یونین کی پابندیوں کی وجہ سے اٹھایا گیا ہے۔

پریس ٹی وی اور ہسپان ٹی وی کی نشریات اسپین اور لاطینی امریکا میں ہیپاسیٹ منصوعی سیارے کی مدد سے دیکھی جاتی تھیں۔ میڈریڈ میں میڈیا پرو کے ترجمان نے بتایا کہ جمعرات کے روز ہمیں ہپاسیٹ کا ارسال کردہ خط ملا، جس میں بتایا گیا تھا کہ انہیں سرکاری مواصلاتی کمپنی نے دونوں ایرانی چینلز کی نشریات منجمد کرنے کی ہدایت کی گئی تھی۔ خط میں نشریات بندش کی کوئی وجہ نہیں بتائی گئی تھی۔

ایران کے محکمہ ریڈیو، ٹی وی میں بین الاقوامی تعلقات کے نگران ایریب محمد سرفراز نے ادارے کی ویب سائٹ پر اپنے بیان میں کہا کہ تہران اپنے میڈیا کے خلاف امریکا اور یورپ کی حالیہ لہر کا راستہ روکنے کے لئے ضروری قانونی اقدامات کرے گا۔

نشریات کی بندش کے شکار دونوں ٹی وی چینلز نے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ حالیہ اقدام آزادی رائے پر نیا حملہ ہے جس کے ذریعے سچائی کی آواز کو دبانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

بیان کے مطابق دونوں چینلز کو کسی قانون کی خلاف ورزی یا نشریات بندش کا پیشگی نوٹس نہیں دیا گیا۔ ہسپانونی حکومت نے اپنے فیصلے کی کوئی قانونی توجیہ پیش نہیں کی۔