.

دلی گینگ ریپ کی شکار لڑکی سنگاپور میں زندگی کی بازی ہار گئی

بھارتی دارلحکومت میں سکیورٹی سخت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
بھارتی دارلحکومت نئی دہلی میں ایک چلتی بس میں اجتماعی زیادتی کا نشانہ بننے والی 23 سالہ لڑکی ہفتے کے روز اپنے زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے سنگاپور میں چل بسی، تاہم اس واقعے کے بعد بھارت میں خواتین کی آزادی اور تحفظ کے حوالے سے ایک نئی بحث چھڑ گئی ہے۔

اس نوجوان لڑکی کے انتقال کی خبر سامنے آتے ہیں، کئی روز سے جاری مظاہروں میں شدت کے امکان کے پیش نظر ہفتے کے روز دارالحکومت نئی دہلی کے حساس علاقوں میں سکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے۔ حساس عمارتوں اور دفاتر تک جانے والے تمام راستوں کو سکیورٹی فورسز نے بند کر رکھا ہے جبکہ مظاہرین سے پرامن رہنے کی اپیل بھی کی جا رہی ہے۔

سولہ دسمبر کو پیش آنے والے اجتماعی زیادتی کے اس واقعے میں ملوث ہونے کے الزام میں حراست میں لیے گئے چھے افراد پر اب اقدام قتل کا الزام بھی عائد کر دیا گیا ہے۔ دوسری جانب اس لڑکی کے انتقال پر بھارتی وزیر اعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ ملک میں ’سماجی تبدیلی‘ کی اشد ضرورت ہے۔ پولیس کے مطابق ان زیرحراست ملزمان پر جرم ثابت ہونے پر انہیں سزائے موت کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

ہفتے کے روز مظاہروں کی نئی لہر کے پیش نظر دارالحکومت نئی دہلی میں ہزاروں پولیس اہلکاروں کو تعینات کیا گیاجبکہ 10 میٹرو اسٹیشن بھی بند کر دیے گئے۔ اس کے علاوہ متعدد سڑکوں پر ہر قسم کی ٹریفک کا داخلہ ممنوع قرار دے دیا گیا ۔ ان تمام اقدامات کے باوجود تقریبا ایک ہزار افراد دو مختلف مقامات پر احتجاج کے لیے جمع ہوئے۔ یہ مظاہرین ملک میں خواتین کے تحفظ کے لیے مؤثر اقدامات اور اجتماعی زیادتی کے واقعے میں ملوث افراد کے لیے سزائے موت کا مطالبہ کر رہے تھے۔ اس ہلاکت کے بعد بھارت میں ایک نئی بحث چھڑ گئی ہے کہ حکومت کو اس حوالے سے کس طرح کے اقدامات اٹھانے کی ضرورت ہے۔

واضح رہے کہ 16 دسمبر کو 23 سالہ میڈیکل اسٹوڈنٹ اور اس کے مرد ساتھی کو ایک بس میں شدید تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد چلتی بس ہی سے باہر پھینک دیا گیا تھا۔ اس نوجوان لڑکی کو جمعرات کے روز انتہائی تشویشناک حالت میں سنگاپور منتقل کیا گیا تھا، تاہم ہسپتال ذرائع کے مطابق شدید چوٹوں کی وجہ سے اس لڑکی کے متعدد اعضاء نے کام کرنا چھوڑ دیا تھا۔ ہفتے کی صبح ہسپتال ذرائع نے بتایا کہ یہ لڑکی اپنی زندگی کی جنگ جیتنے کی بھرپور کوشش کرتی رہی، تاہم کامیاب نہ ہو پائی۔