.

دمشق سے روسی شہریوں کے انخلاء میں مدد کے لئے دو جہاز لبنان ارسال

شامی ساحل سے روس کی سب سے بڑی جنگی مشقیں جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
شام میں مقیم اپنے دو سو شہریوں کے انخلاء کے لئے روس آج [منگل] کو دو ہوائی جہاز لبنان روانہ کر رہا ہے۔ اس امر کا اعلان روس میں ہنگامی صورتحال کی وزارت نے کیا ہے۔

ہنگامی امور کی وزارت سے وابستہ اہلکار ایرینا روسیوس نے 'انٹرفیکس' نیوز ایجنسی کو بتایا کہ روسی حکام کے مطالبے پر ان کی وزارت دو جہاز لبنانی دارلحکومت بیروت بھجوا رہی ہے تاکہ شام سے نقل مکانی کے خواہشمند روسی شہریوں کو بہ سہولت نکالا جا سکے۔

انہوں نے بتایا کہ تقریبا دو سو روسی ان جہازوں کے ذریعے وطن واپس لائے جائیں گے۔ اے ایف پی کے مطابق انہوں نے اس انتظام کی مزید کوئی تفصیل نہیں بتائی۔ یاد رہے کہ روس آخری ملک ہے کہ جو شام میں جاری خونریز واقعات کے بعد بھی دمشق کی حمایت کر رہا ہے۔

حکومت کے حامیوں اور مخالفین کے درمیان جاری تنازعے میں اقوام متحدہ کے مطابق ابتک ساٹھ ہزار افراد مارے جا چکے ہیں۔ تاہم اس کے باوجود شام میں کاروبار کرنے والی مختلف روسی کمپنیوں سے وابستہ روسی شہری تاحال جنگ زدہ ملک میں مقیم ہیں۔

روس، شام کے ساحل کے قریب اپنی سب سے بڑی بحری مشقیں کر رہا ہے۔ اس سے قبل خبر رساں اداروں نے روسی فوجی ذرائع کے حوالے سے بتایا تھا ان مشقوں میں حصہ لینے والے جہاز شام سے روسی شہریوں کے اںخلاء میں مدد کے لئے بھی استعمال ہو سکتے ہیں۔