چوہے نے برطانوی 'آر جے' کی آن ائر چیخیں نکلوا دیں

خاتون پیش کار کی مستعفی ہونے کی دھمکی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

چوہوں اور حشرات الارض سے خواتین کے خوفزدہ ہونے کے قصے دنیا بھر میں مشہور ہیں لیکن برطانوی نشریاتی ادارے کی خاتون ریڈیو جوکی نے تو خوف کا آن ائر ایسا مظاہرہ کیا کہ جسے تادیر یاد رکھا جائے گا۔


تفصیلات کے مطابق بی بی سی ریڈیو کی سینتالیس سالہ پروگرام پیش کار شیلا فوگراتی ایک خیراتی انجمن کے عہدیدار سے منشیات کے خاتمے سے متعلق براہ راست انٹرویو کر رہی تھی کہ ان کے مہمان نے اسٹڈیو میں چوہے کی موجودگی کی طرف نشاندہی کی۔ سخت انٹرویوز کے لئے مشہور فوگراتی بھول گئیں کہ انکا پروگرام براہ راست نشر ہو رہا ہے اور وہ چوہے کی موجوددگی کے بارے میں سنتے ہی 'چوہا ۔۔۔ چوہا ۔۔۔ کوئی ہے جو اسے اسٹڈیو سے باہر نکالے' پکارنے لگیں۔


تاہم جلد ہی انہیں اپنے آن ائر ہونے کا احساس ہوا تو فوگراتی نے سامعین سے معذرت کرتے ہوئے بتایا کہ وہ اسٹڈیو میں چوہے کی موجودگی کی وجہ سے خود پر قابو نہیں رکھ سکی اور کرسی پر چوہے چوہے کا شور اور اچھل کود کرنے لگی تاکہ چوہا ان کی کرسی کے نیچے سے گذر جائے۔ انہوں نے معذرت کی وہ اب مزید پروگرام جاری نہیں رکھ سکیں گی۔


تاہم اسٹڈیو میں دراندازی کا مرتکب چوہا کافی دلیر ثابت ہوا، اس پر خاتون کی چیخ و پکار کا چنداں اثر نہیں اور وہ ایک جست لگا کر میز پر چڑھ گیا۔ خاتون نے چوہے کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اگر تم نے مجھے چھونے کی کوشش کی تو میں نوکری چھوڑ دوں گی۔ تاہم بعد میں خاتون اینکر نے مطالبہ کیا کہ ان کا اسٹڈیو تبدیل کیا جائے کیونکہ وہ چوہے والے جگہ پر دوبارہ پروگرام نہیں کریں گی۔


دلچسپ ویڈیو دیکھنے کے لئے اس لنک کو کلک کریں۔ پاکستان میں زائرین العربیہ سے معذرت کے ساتھ کیونکہ وہاں یو ٹیوب گزشتہ کئی مہینوں سے بندش کا شکار ہے۔


https://www.youtube.com/watch?v=P4Eimz90tbc

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں