.

18 امریکی عہدیداروں کے روس داخلے پر پابندی

واشنگٹن کے جانب سے اتنے ہی روشی شہریوں پر پابندی کا جواب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

روس نے اٹھارہ امریکیوں کے اپنے ملک میں داخلے پر پابندی عاید کر دی ہے۔ یہ اقدام گزشتہ روز اٹھارہ روسی شہریوں پر امریکا میں اقتصادی پابندیاں عاید کرنے کے جواب میں اٹھایا گیا ہے جن کے بارے شبہ ہے کہ وہ روس میں کرپشن کے خلاف آواز اٹھانے کی پاداش میں قید جج سرگئی مانٹسیکی کے قتل میں ملوث ہیں۔

ماسکو کی وزارت خارجہ نے اپنے بیان میں ان اٹھارہ امریکیوں کے نام بتائے ہیں کہ جو 'انسانی حقوق کی خلاف روزیوں میں ملوث' ہیں۔ بیان کے مطابق "قواعد و ضوابط سے جنگ ہمارا شوق نہیں لیکن ہم حقیقی بلیک میلنگ سے نظر پوشی بھی نہیں کر سکتے"۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ہمارے شہریوں کے خلاف امریکی چارج شیٹ تو اندھا دھند جاری کی گئی ہے لیکن ہماری امریکی حکام کے خلاف چارج شیٹ ان لوگوں کے نام ہیں کہ جنہوں نے گوانتانامو بے میں زیر حراست قیدیوں پر تشدد اور عمر قید کو قانونی جواز بخشا۔ اس کے علاوہ ان افراد کی کوشش تھی کہ وہ روسی شہریوں کو گرفتار یا اغوا کر سکیں۔

یاد رہے کہ روس میں بدعنوانی کے خلاف جدوجہد کرنے والا معروف وکیل سرگئی مانٹسیکی ماسکو جیل میں تشدد کے باعث 2009ء کو ہلاک ہو گیا تھا۔

امریکا نے جمعہ کی شب اعلان کیا تھا کہ وہ سرگئی مانٹسیکی کے قتل میں ملوث 16 روسی شہریوں پر معاشی پابندیاں عاید کر رہا ہے۔ نیز دو چیچن پاشندوں پر انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی پاداش میں ایسی ہی پابندیاں عاید کی گئی ہیں۔