القاعدہ کے مشتبہ ارکان نے 03 یمنی ہواباز ہلاک کر دیئے

کرنل رینک کے پائلٹ العناد ائر بیس پر تعینات تھے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمنی فوج کے حکام کا کہنا ہے کہ القاعدہ سے وابستہ مشتبہ افراد نے یمنی فضائیہ کے تین اعلی فوجی افسروں کو ہلاک کر دیا ہے۔ دہشت گردوں کا نشانہ بننے والے کرنل جنوبی صوبے لاہیج میں العناد ائربیس پر تعنیات تھے۔

حکام کے مطابق نامعلوم مسلح افراد نے کرنل کے عہدے کے برابر یمنی فضائیہ کے تین پائیلٹوں کو لاہیج کے صدر مقام حتا میں اس وقت نشانہ بنایا جب وہ العناد ائر بیس کی جانب جا رہے تھے۔ مشتبہ حملہ آوروں کا تعلق القاعدہ سے بتایا جاتا ہے۔

جنوبی یمن میں القاعدہ کا نیٹ ورک اور اس کے مضبوط ٹھکانے تقریباً ختم ہو چکے ہیں۔ اس آپریشن میں یمنی فوج کو امریکی ڈرون طیاروں کی مدد بھی حاصل رہی ہے۔

گزشتہ برس مئی اور جون کے دوران یمنی فوج کا القاعدہ کے خلاف آپریشن جوبن پر تھا، انہیں دنوں جزیرہ نما عرب میں سرگرم القاعدہ نے العناد ائر بیس پر تعینات پائلٹوں کے ناموں کی فہرست شائع کی تھی جو ان کی ہٹ لسٹ پر تھے۔ القاعدہ کے مطابق وہ ان ہوابازوں کو اپنے ٹھکانوں پر حملے کرنے کی پاداش میں قتل کرنا چاہتے ہیں۔

یمنی حکام کے مطابق سرکاری فوج نے گزشتہ برس نومبر میں العناد ائر بیس پر موجود امریکیوں کو نشانہ بنانے کا منصوبہ ناکام بنایا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں