.

برکینو فاسو کے وزیر نیوز کانفرنس کے دوران بے ہوش ہو گئے

داؤد اوگلو اور دیگر حکام نے انہیں روسٹرم پر گرنے سے بچانے کی کوشش کی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برکینو فاسو کے وزیر خارجہ جبریل یابینئی باسولیہ گزشتہ شب اپنے ترک ہم منصب احمد داؤد اوگلو کے ہمراہ نیوز کانفرنس کے دوران بے ہوش ہو گئے۔

تفصیلات کے مطابق ترک وزیر خارجہ مسٹر جبریل کی قاہرہ میں ہونے والے نیوز کانفرنس مترجم کی مدد سے سن رہے تھے۔ اس دوران انہیں لگا جیسے ترجمے میں شاید کوئی خلل پیدا ہو رہا ہے تو ایسے میں وہ برکینو فاسو کے وزیر خارجہ کے قریب ہونے لگے تاکہ ان کی بات بہتر طور سمجھ سکیں۔ اسی اثناء میں جبریل بابینئی باسولیہ اپنا توازن کھوتے ہوئے روسٹرم پر بے ہوش کر گر پڑے۔ مسٹر داؤد اوگلو انہیں گرنے سے بچانے کے لئے آگے بڑھے لیکن وہ اپنے ہم منصب کو گرنے سے بچا نہ سکے۔

ترک ذرائع ابلاغ کے مطابق باسولیہ نیوز کانفرنس کے دوران بے ہوش کر گرنے لگے تو داؤد اوگلو اور دیگر حکام ان کی مدد کو آگے بڑھے تاکہ انہیں گرنے سے بچا سکیں، لیکن وہ اس میں ناکام رہے۔

مسٹر باسولیہ کو فوری طور پر ہسپتال منتقل کیا گیا۔ یاد رہے کہ ٹھنڈ لگنے سے پیدا ہونے والے مرض کے افاقے کے لئے پر اینٹی بائیوٹیک ادویہ دی جا رہی تھیں جن کے سائیڈ ایفکٹ کے طور پر برکینو فاسو کے وزیر مضمحل ہو کر بے ہوش ہوئے، تاہم بعد میں ان کی حالت بہتر ہو گئی۔