یمن: پولیس نے القاعدہ کے سیل کا قلع قمع کردیا، ایک جنگجو ہلاک

القاعدہ کے جنگجوؤں پر جنوبی شہر عدن میں بم حملوں کی منصوبہ بندی کا الزام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یمن کے جنوبی شہر عدن میں پولیس نے ایک گھر پر چھاپہ مار کارروائی کے دوران القاعدہ کے ایک مشتبہ جنگجو ہلاک کردیا ہے اور تین کو گرفتار کر لیا ہے۔

یمن کے سکیورٹی عہدے دار کا کہنا ہے کہ القاعدہ کا یہ سیل اہم تنصیبات پر بم حملوں کی منصوبہ بندی کررہا تھا اور ہم نے عدن کے علاقے منصورہ کے نزدیک ایک مکان میں کارروائی کرکے دہشت گردی کے اس سیل کا خاتمہ کردیا ہے۔

اس عہدے دار کے بہ قول القاعدہ کے جنگجوؤں میں سے ایک نے جسم کے ساتھ دوخودکش جیکٹس باندھ رکھی تھیں اور اس نے وہاں خود کو اڑانے کی کوشش کی لیکن اس دوران سکیورٹی فورسز نے فائرنگ کر کے اس کو ہلاک کردیا۔

انھوں نے کہا کہ سیل کے تین مشتبہ ارکان کو گرفتار کر لیا گیا ہے اور پولیس نے ان کے قبضے سے بارود سے بھری متعدد بیلٹس برآمد کر لی ہیں۔سیل عدن میں اہم تنصیبات پر بم حملوں کی منصوبہ بندی کررہا تھا۔

واضح رہے کہ یمن کی سکیورٹی فورسز نے گذشتہ مہینوں کے دوران القاعدہ کے جنگجوؤں کو جنوبی علاقوں سے نکال باہر کیا تھا۔اس کے علاوہ گذشتہ سال کے دوران امریکا کے بغیر پائلیٹ جاسوس طیاروں کے میزائل حملوں میں بھی ان کے بہت سے جنگجو مارے گئے ہیں۔یمنی سکیورٹی فورسز کی کارروائیوں کے بعد القاعدہ کے جنگجو پہاڑی علاقے کی جانب چلے گئے ہیں اور وہاں سے وہ گاہے گاہے پولیس اور فوجی افسروں پر راکٹ چلاتے یا چھاپہ مار حملے کرتے رہتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں