.

برازیل میں سیکڑوں مظاہرین پارلیمنٹ کے گنبد پر چڑھ گئے

مختلف شہروں میں لاکھوں افراد کا احتجاج، ریاست ریو میں حکومتی دفتر کا محاصرہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برازیل میں سیکڑوں مظاہرین پارلیمنٹ ہاؤس کی عمارت کے اطراف سکیورٹی باڑ نہ ہونے کا فائدہ اٹھاتے ہوئے پارلیمنٹ کے گنبد پر چڑھ گئے اور وہاں پر گیت گاتے اور رقص کرتے رہے۔ یہ مظاہرے حکومت کی جانب سے اولمپکس گیم 2014ء کے قانون کے خلاف کیے جا رہے تھے۔

مظاہرین، پولیس کے مطابق جن کی تعداد پانچ ہزار کے لگ بھگ دی، نے حکومت کے خلاف زبردست نعرے بازی کی اور برازیل کی پارلیمان کی عمارت پر چڑھ گئے۔ یہ منچلے مظاہرین ایوان نمائندگان اور سینیٹ کی عمارتوں کے گنبدوں پر فلڈ لائٹس میں ڈانس کرتے رہے۔

اولمپکس 2014 کے کھیلوں کے لیے ٹرانسپورٹ کے کرایوں اور میچوں کی ٹکٹوں میں اضافے کے خلاف برازیل کے تمام بڑے شہروں میں لاکھوں افراد نے احتجاجی ریلیاں نکالیں۔

ادھر ریاست ریو ڈی جینرو میں مظاہرہ مخالف پولیس نے ریاست میں قائم حکومتی ہیڈ کوارٹرز کا محاصرہ کرنے والے مظاہرین کو زبردستی منتشر کردیا۔ بسوں پر سوار مسلح پولیس نے احتجاج کرنے والے شہریوں پر آنسو گیس کے شیلوں اور ربڑ کی گولیوں کی بوچھاڑ کر دی اور متعدد کو گرفتار کرلیا۔

ریاست میں حکومتی ہیڈ کوارٹر کے سامنے مظاہرین کے ایک چھوٹے گروپ پر پولیس اہلکاروں نے حملہ کیا۔ اس دوران مظاہرین اور پولیس کے درمیان جھڑپیں شروع ہوگئیں جس میں چند افراد زخمی بھی ہوئے۔