.

قطرمیں اپنے ہم وطن شہری کو جیل بھجوانے والا الجزائری سفیر فارغ

خبرسب سے پہلے 'العربیہ' نے بریک کی تھی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

خلیجی ریاست قطر میں اپنے ملک کے ایک شہری کو جیل بھجوانے والے دوحہ میں تعینات الجزائری سفیر عبدالفتاح زیانی کو ان کے عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے۔ مسٹر زیانی گذشتہ ماہ مئی میں اس وقت اندرون اور بیرون ملک سخت تنقید کا نشانہ بنے تھے جب انہوں نے دوحہ میں مقیم ایک الجزائری باشندے کو"ذاتی عناد" کی بنیاد پر جیل بھجوا دیا تھا۔

الجزائری میڈیا مطابق حکومت نے کئی ممالک میں تعینات سفیروں کوان کے عہدے سے ہٹا دیا ہے۔ فارغ کیے جانے والے سفیروں میں دوحہ میں تعینات سفیر عبدالفتاح الزیانی بھی شامل ہیں۔

خیال رہے کہ عبدالفتاح زیانی اور ایک الجزائری شہری کے درمیان تنازع کی خبر"العربیہ ڈاٹ نیٹ" نے بریک کی تھی۔ سفیرکے ہاتھوں جیل کی ہوا کھانے والے شخص کے سابق فوجی ریٹائرڈ والد حسان نے بتایا کہ اس کا بیٹا عادل الیکٹریکل انجینیئر ہے، جو قطرمیں ملازمت کر رہا تھا۔ وہاں اس کی ملازمت ختم ہوگئی تو اس نے اپنے ملک کے سفیر سے ملاقات کرکے ان سے مدد کی درخواست کی۔

سفیر محترم نے تحقیر آمیز لہجے میں اسے کہا کہ "اگر آپ ناکام شخص نہ ہوتے توآپ کی ملازمت قائم رہتی"۔ اس پر عادل نے جواب دیا کہ "آپ سفیر ہیں اس طرح کی گفتگو آپ کو زیب نہیں دیتی"۔ جس کے بعد عادل کو سفارت خانے سے نکال دیا گیا۔ عادل کو یہ بات اتنی بُری لگی اوراس نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ "فیس بک" پراس کا تبصرہ کردیا۔ جب سفیر عبدالفتاح الزیانی کو اس تبصرے کا علم ہوا توانہوں نے دوحہ کے پبلک پراسیکیوٹرجنرل میں عادل کےخلاف کارروائی کی درخواست دی۔ پولیس نے اسے گرفتار کیا اور ایک رات اسے حبس بے جا میں رکھا اور تشدد کا بھی نشانہ بنایا۔