مصر کے ممتاز عالم دین حازم ابو اسماعیل گرفتار

'جسٹس اینڈ ڈیولپمنٹ' کے رہنما کو رہا نہیں کیا گیا: پراسیکیوشن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

مصری ذرائع ابلاغ کے مطابق سیکیورٹی فورسسز نے سرکردہ اسلام پسند رہنما حازم صلاح ابو اسماعیل کو جمعہ اور ہفتے کی درمیان رات گرفتار کر کے فوری طور پر طرہ جیل منتقل کر دیا ہے۔ سیکیورٹی اداروں کے ہنگامی بنیادوں پر کئے جانے والے گرفتاری آپریشن کی وجہ ان کے حامی گرفتاری کے وقت موجود نہیں تھے۔

ادھر مصری پراسیکیوشن نے اخوان المسلمون کے سیاسی چہرہ 'جسٹس اینڈ ڈیولپمنٹ' پارٹی کے سربراہ ڈاکٹر سعد الکتاتنی کی گزشتہ روز رہائی کی تردید کی ہے۔ استغاثہ کے مطابق وہ ابھی تک حکام کی تحویل میں ہیں، جو ان سے تحقیقات کر رہے ہیں۔

درایں اثنا اخوان المسلمون کے گرفتار نائب مرشد عام رشاد البیومی کی رہائی کی خبریں بھی گردش میں ہیں۔ مصری اٹارنی جنرل نے دونوں رہنماوں سے ان الزامات کی تحقیق کر رہے ہیں جس میں کہا گیا ہے کہ انہوں نے تنظیم کے دفتر کے باہر اپنے کارکنوں کو احتجاجی مظاہرہ کرنے والوں کو قتل کرنے پر اکسایا۔

بدھ کے روز صدر مرسی کو اقتدار سے ہٹانے کے بعد مصری فوج کی جانب سے گرفتاریوں کا سلسلہ شروع ہو گیا تھا، جو دراصل عبوری دور کے نمایاں خدوخال کا مظہر قرار دیا رہا ہے۔ ان گرفتاریوں سے معزول صدر کی جماعت اور ان کے حامیوں میں شدید غم وغصہ پایا جاتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں