.

سعودی عرب کا مصر کے لیے 5 ارب ڈالرز کا امدادی پیکج منظور

یو ای اے معاشی مشکلات کا شکار ملک کو 3 ارب ڈالرز کی امداد دے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب نے مصر کے بجٹ خسارے پر قابو پانے کے لیے پانچ ارب ڈالرز کے امدادی پیکج کی منظوری دی ہے۔

العربیہ ٹیلی ویژن نے سعودی عرب کے وزیرخزانہ کے حوالے سے اطلاع دی ہے کہ اس امدادی پیکج میں سے مصر کو دو ارب ڈالرز مالیت کی پیٹرولیم اور گیس مصنوعات مہیا کی جائیں گی۔دو ارب ڈالرز نقد رقم کی شکل میں دیے جائیں گے اور یہ رقم براہ راست مصر کے مرکزی بنک میں منتقل کی جائے گی۔ایک ارب ڈالرز گرانٹ کی شکل میں دیے جائیں گے۔

قبل ازیں متحدہ عرب امارات (یو اے ای) نے مصر کو ایک ارب ڈالرز کی امدادی رقم اور دو ارب ڈالرز قرضے کی شکل میں دینے سے اتفاق کیا تھا۔ایک مصری ذریعے کے مطابق متحدہ عرب امارات کی جانب سے مصر کے لیے بھاری امدادی پیکج متوقع ہے۔قرضے کی رقم مصر کے مرکزی بنک میں بھیجی جائے گی۔تاہم سود کی شرح اور اس رقم کی واپسی کی شرائط کو ابھی حتمی شکل نہیں دی گئی ہے۔

واضح رہے کہ یو اے ای نے مصر میں اخوان المسلمون سے ماضی میں تعلق رکھنے والے صدر محمد مرسی کی مسلح افواج کے ہاتھوں برطرفی پر سب سے پہلے مبارک باد دی تھی۔یو اے ای میں گذشتہ ایک سال کے دوران اخوان سے تعلق رکھنے والے متعدد کارکنان کو گرفتار کیا گیا ہے اور انھیں حکومت کا تختہ الٹنے کی مبینہ سازش کے الزام میں حال ہی میں سات سے پندرہ سال کے درمیان قید کی سزائیں سنائی گئی ہیں۔