واشنگٹن کے ڈیلس ہوائی اڈے پر شامی سفارت کار گرفتار

شامی سفارت کار کا ویزا منسوخ،امریکا سے بے دخل کرنے کی تیاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکا میں شامی صدر بشارالاسد کی جانب سے بھیجے گئے ایک سفارت کار کو بدھ کی رات واشنگٹن کے ڈیلس ہوائی اڈے پر گرفتار کر لیا گیا ہے اوراب ان صاحب کو امریکا بدر کرنے کی تیاری کی جارہی ہے۔

وائس آف امریکا کی رپورٹ کے مطابق شامی سفارت کار علی دغمان کو غلطی سے امریکی ویزا جاری کردیا گیا تھا لیکن اب اس کو منسوخ کردیا گیا ہے۔وی او اے نے ایک امریکی عہدے دار کے حوالے سے بتایا ہے کہ ''امریکا واشنگٹن میں شامی سفارت خانے کے باقی ماندہ عملے کے داخلے کو بھی محدود کرنے کے لیے اقدامات کررہا ہے''۔

شامی سفارت کار کو ویزے کے اجراء پر امریکی کانگریس کے ارکان اور جلاوطن شامی حزب اختلاف نے شدید ردعمل کا اظہار کیا تھا اور ان کا کہنا تھا کہ اس سے لگتا ہے اوباما انتظامیہ کو بشارالاسد رجیم کو ہٹانے میں کوئی دلچسپی نہیں ہے۔

واضح رہے کہ امریکا نے 2011ء میں شامی صدر بشارالاسد کی اپنے خلاف عوامی احتجاجی تحریک کو دبانے کے لیے جبروتشدد کی کارروائیوں کے بعد دمشق میں اپنے سفارت خانے کو بند کردیا تھا۔اس کے ردعمل میں شام نے بھی دمشق سے اپنے سفیر کو واپس بلا لیا تھا۔جون 2012ء میں امریکا نے واشنگٹن میں شامی سفارت خانے کے ناظم الامور زہیر جبور کو بے دخل کردیا تھا اور شامی رجیم کے ساتھ تمام سفارتی روابط منقطع کر لیے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں