بھارتی اور چینی فوجی چومار سیکٹر میں آمنے سامنے

چینی ہمارے بنکر توڑ گئے اور نگران کیمرے اتار کر لے گئے: بھارت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

بھارت کے سرکاری ذرائع نے امر کی تصدیق کی ہے بھارت اور چین کے سرحدی علاقے چومار میں دونوں ملکوں کے سپاہی آمنے سامنے آ گئے۔ چومار سیکٹر پر چین اور بھارت کے درمیان حقیقی کنٹرول لائن کے معاملے پر اختلاف پایا جاتا ہے۔

بھارت نے الزام لگایا ہے کہ گشت پر مامور چینی فوجی دستوں نے مبینہ طور پر چومار کی کنٹرول لائن سرحدی خلاف ورزی کی تھی۔ جس کے بعد بھارتی پٹرولنگ دستہ بھی سامنے آ گیا۔ بھارتی سرکاری ذرائع کے مطابق چین کی طرف سے مبینہ دراندازی 17 جون کو ہوئی اور چینی فوجی نہ صرف نگرانی کے لیے لگائے کیمرے اتار کر لے گئے بلکہ بھارتی فوجیوں کے بنکر بھی توڑ گئے۔

دوسری جانب بیجنگ میں وزارت خارجہ کی ترجمان ہواچن انگ اس واقعے کے بارے میں کہا انہیں بھی سے معلوم ہوا ہے ابھی وہ حقیقی صورتحال سے آگاہ نہیں، تاہم ترجمان نے کہا کہ سرحد پر صورتحال مستحکم ہے اور یہ اتفاق رائے پایا جاتا ہے کہ جب تک سرحدی تنازعہ بات چیت سے حل نہیں کیا جاتا موقف جوں کا توں رہے گا۔

چینی ترجمان کے مطابق کسی بھی ملک کو انفراسٹکچر قائم کرنے کی اجازت نہیں ہے بھارت کو بھی سرحدی صورتحال مستحکم رکھنے کی کوشش کرنا چاہیے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں