.

بزرگ و بیمار افراد اور حاملہ خواتین سے امسال حج نہ کرنے کی اپیل

'مرس' نامی وائرس سے سعودی عرب میں 38 افراد جاں بحق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب نے ملک میں مرس وائرس کو مزید پھیلنے سے روکنے کے لیے معمرافراد، حاملہ خواتین اور بیمارافراد سے رواں سال حج نہ کرنے کی اپیل کی ہے۔

سعودی وزارت صحت کی جانب سے جاری ہدایات میں کہا گیا ہے کہ معمرافراد اور ایسے لوگ جو دل، گردے، سانس اور شوگر جیسی بیماریوں میں مبتلا ہیں رواں سال حج اور عمرہ ادا نہ کریں۔

وزارت کی ویب سائٹ پر جاری بیان میں حاملہ خواتین، بچوں اور قوت مدافعت کی کمی کا شکار افراد کو بھی درخواستیں جمع نہ کرانے کا کہا گیا ہے تاہم اس حوالے سے کسی قسم کی عمر کی حد متعین نہیں کی گئی۔ سعودی حکام کا کہنا ہے کہ یہ اقدام مرس جیسے جان لیوا وائرس کو بڑھنے اور لوگوں کو اس سے محفوظ رکھنے کے لیے اٹھایا گیا ہے۔

واضح رہے کہ سعودی عرب سمیت بعض خلیجی ریاستوں میں اس وقت 'مرس' [مڈل ایسٹ ریسپائرٹری سنڈروم] نامی وائرس پھیلا ہوا ہے جس کی وجہ سے صرف سعودی عرب میں 38 افراد جاں بحق ہو چکے ہیں جب کہ تاحال اس وائرس کے پھیلنے کی وجوہات کا پتہ نہیں لگایا جا سکا ہے۔