.

یورپی یونین خارجہ امور کی سربراہ کیتھرائن آشٹن مصر پہنچ گئیں

عبوری کابینہ کےحلف کے بعد قاہرہ آنیوالی پہلی یورپی عہدیدار ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کی عبوری کابینہ کی تقریب حلف برداری کے بعد چوبیس گھنٹوں کے اندر اندر 27 ممالک پر مشتمل علاقائی اتحاد یورپی یونین کی اہم عہدیدار اور خارجہ امور کے شعبے کی سربراہ کیتھرائن آشٹن قاہرہ آئی ہیں۔

تین جولائی کو منتخب صدر مرسی کی برطرفی کے چند دن بعد سب سے پہلے امریکی نمائندے اور فوجی حمائت و شمولیت سے عبوری حکومت کی تشکیل کے اگلے ہی روز یورپی اعلی سطح کی نمائندہ کا آنا اہم واقعہ ہے۔

کیتھرائن نے اپنی اچانک قاہرہ آمد کے بارے میں کہا ''دورہ قاہرہ کا مقصد یورپی یونین کے اس پیغام کو موئثر طریقے سے پہنچانا ہے کہ تمام جمہوریت پسند طبقوں کی شمولیت سے سیاسی عمل جاری رہے۔''

اس سے پہلے جب امریکی نمائندے نے مصر کا دورہ کیا تو سلفی مسلک کی پیروکار دینی جماعت ''نور پارٹی'' اور مرسی مخالف "تمرد" تحریک نے امریکی نمائندے سے ملاقات سے انکار کر دیا تھا، اور اب کیتھرائن آشٹن کی آمد سے پہلے ہی معزول صدر مرسی کی جماعت نےعبوری وزیر اعظم اور اول نائب وزیر اٰعظ٘م جنرل عبدالفتاح اسیسی، جو کہ وزیر دفاع بھی ہیں، سمیت 34 رکنی عبوری کابینہ کو مسترد کر دیا ہے۔