.

اسرائیل: ساحلی سیاحتی مقام ایلات کے نزدیک ''آئرن ڈوم'' کی تنصیب

سیناء میں حالیہ حملوں کے بعد میزائل دفاعی نظام کی سرحدی علاقے میں منتقلی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیل نے مصر کے علاقے جزیرہ نما سینا کے نزدیک واقع ساحلی سیاحتی مقام ایلات میں اپنا آئرن ڈوم میزائل دفاعی نظام نصب کردیا ہے۔

صہیونی فوج کی خاتون ترجمان نے بحیرہ احمر کے کنارے واقع ایلات میں جمعہ کی صبح آئرن ڈوم بیٹری کی تنصیب کی اطلاع دی ہے۔ ترجمان نے کہا کہ ''ملک کے مختلف علاقوں میں (میزائل دفاعی) بیٹریاں نصب کی گئی ہیں اور سکیورٹی کی صورت حال کے پیش نظر انھیں ایک جگہ سے دوسری جگہ منتقل کردیا جاتا ہے''۔

لیکن اسرائیلی میڈیا کا کہنا ہے کہ میزائل دفاعی نظام کی تنصیب کا تعلق ایلات کے ساتھ واقع مصر کے سرحدی علاقے میں بد امنی سے ہے۔ مصری فوج نے جزیرہ نما سیناء میں جنگجوؤں کے خلاف مہم شروع کررکھی ہے۔

اسرائیل کی ایک نیوز ویب سائٹ وائی نیٹ نے ایک اور پہلو کی بھی نشان دہی کی ہے اور اس نے بتایا ہے کہ جنوبی اسرائیل میں اس وقت سیاحوں کی آمد آمد ہے اور اس سیاحتی سیزن کے عروج کے دنوں میں میزائل دفاعی نظام کی تنصیب کی گئی ہے۔

واضح رہے کہ ایلات میں ماضی میں سیناء کی جانب سے حملے ہوتے رہے ہیں۔ اپریل میں مصر کے سرحدی علاقے سے ایلات کی جانب راکٹ فائر کیے گئے تھے اور چار جولائی کو پہلے سے چلائے گئے ایک راکٹ کا ملبہ ملا تھا۔

قبل ازیں مصر کی سرکاری خبررساں ایجنسی مینا نے اطلاع دی کہ جزیرہ نما سیناء میں گذشتہ دو روز کے دوران فوج کی کارروائی میں دس جہادیوں کو ہلاک کردیا گیا ہے۔مصری فوج نے تین جولائی کو منتخب صدر ڈاکٹر محمد مرسی کی برطرفی کے بعد سےعلاقے میں جنگجوؤں کی شورش پر قابو پانے کے لیے کارروائی شروع کررکھی ہے۔

آئرن ڈوم میزائل دفاعی نظام کی تنصیب کی خبر سے چند گھنٹے پیشتر ہی غزہ کی پٹی سے جنوبی اسرائیل کی جانب دو راکٹ فائر کیے گئے تھے۔ تاہم ان سے کوئی جانی اور مالی نقصان نہیں ہوا تھا۔