سنوڈن کو ماسکو داخلے کے لیے دستاویزات مل گئیں

دستاویزات سنوڈن کی قانونی مشاورت دینے والی وکیل کے پاس ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

امریکا کو جاسوسی کے الزام میں مطلوب سی آئی اے کے سابق اہلکار ایڈورڈ سنوڈن کو دستاویزات مل گئی ہیں، جس کے بعد وہ ماسکو ائرپورٹ کے ٹرانزٹ زون سے نکل کر روس میں داخل ہو سکتے ہیں۔

یہ بات روس کی سرکاری نیوز ایجنسی آر آئی اے نوفستی کے حوالے سے بتائی ہے۔ نوفستی نے ایک نامعلوم سکیورٹی اہلکار کے حوالے سے بتایا ہے کہ سنوڈن کو دستاویزات جاری کر دی گئی ہیں جس سے وہ باقاعدہ طور پر روس میں داخل ہو سکتے ہیں۔

نوفستی نیوز ایجنسی کا کہنا ہے کہ یہ دستاویزات سنوڈن کو قانونی مشاورت دینے والے روسی وکیل اناتولی کوخیرینا کو دی گئی ہیں جواس وقت ماسکو ائرپورٹ پر موجود ہیں۔ ماسکو ایئرپورٹ کی ایک ترجمان انا زاخارینکوفا نے خبر رساں ادارے اے پی کو بتایا کہ اناتولی کوخیرینا سنوڈن سے ملاقات کرنے والے ہیں۔ کوخیرینا کا کہنا ہے کہ سنوڈن روس کی شہریت کے لیے بھی درخواست دے سکتے ہیں اور وہ وہاں ملازمت کرنے میں بھی دلچسپی رکھتے ہیں۔

دوسری جانب انٹرفیکس نیوز ایجنسی کا کہنا ہے کہ سنوڈن تیار ہو رہےہیں اور وہ آئندہ چند گھنٹوں میں ایئرپورٹ سے نکل سکتے ہیں۔
سنوڈن نے امریکی نیشنل سکیورٹی ایجنسی (این ایس اے) کے خفیہ پروگرام پرزم کا انکشاف کیا تھا۔ وہ 23 جون سے ماسکو ائرپورٹ کے ٹرانزٹ زون میں ہے۔ وہ این ایس اے کی دستاویزات ذرائع ابلاغ کو دینے کے بعد ہانگ کانگ چلے گئے تھے جہاں سے وہ ماسکو پہنچے۔ امریکا کی جانب سے شہریت کی تنسیخ کے بعد وہ مزید سفر کے قابل نہیں رہے تھے۔

انہوں نے گزشتہ ہفتے روس سے عارضی سیاسی پناہ کی درخواست کی تھی۔ روس کے صدر ولادیمیر پوٹن کہہ چکے ہیں کہ سنوڈن خفیہ معلومات کا انکشاف بند کر دیں تو انہیں سیاسی پناہ دی جا سکتی ہے۔

روس کی فیڈرل مائیگریشن سروس کی ایک ترجمان نے اے پی کو بتایا کہ سیاسی پناہ کے لیے سنوڈن کی در‌خواست کس مرحلے میں ہیں، وہ اس بارے میں کچھ نہیں جانتیں۔

ادھر اے ایف پی خبر رساں ایجنسی کا کہنا ہے سنوڈن روس میں داخل ہوئے تو اس سے واشگٹن اور ماسکو حکومتوں کے تعلقات مزید کشیدہ ہو سکتے ہیں۔ روس سنوڈن کو امریکا کے حوالے کرنے سے انکار کر چکا ہے اور ماسکو حکام کا کہنا ہے کہ امریکا اور روس کے درمیان ملزمان کی تحویل کا کوئی معاہدہ نہیں ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں