.

یورپی یونین کے خارجہ امور کی سربراہ مصر پہنچ گئیں

کیتھرائن عبوری صدر کے علاوہ اخوانی رہنماوں سے بھی مل سکتی ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یورپی یونین کے خارجہ امور کی سربراہ کیتھرائن آشٹن مصر میں جاری کشیدگی اور خونریزی کے باعث ہنگامی دورے پر قاہرہ پہنچ گئی ہیں۔ معزول کیے گئے صدر مرسی کی رہائی کا مطالبہ کرنے والی اس یورپی عہدیدار کا رواں ماہ کے دوران مصری دارا لحکومت کا یہ دوسرا دورہ ہے۔ وہ اس سے پہلے عبوری حکومت کی تشکیل سے ایک روز قبل قاہرہ میں تھیں۔

قاہرہ کے ہنگامی دورے کے لیے وہ عبوری مصری حکومت اور اقتدار سے محروم ہونے والے صدر کی حامی جماعت اخوان المسلمون کے رہنماوں سے ملاقاتوں کا ایجنڈا لے کر آئی ہیں۔ واضح رہے مصر میں منتخب صدر کی برطرفی کے بعد وہ واحد عالمی شخصیت ہیں جو نہ صرف دوسری بار مصر آئی ہیں بلکہ دوطرفہ افہام و تفہیم اور تحمل کے لیے براہ راست رابطہ کر کے کہہ رہی ہیں۔ تاہم ترک وزیر اعظم طیب ایردوآن نے یورپی یونین کی طرف سے مظاہرین کے قتل پر سخت موقف سامنے نہ آنے پر شدید تنقید کی ہے۔

کیتھرائن آشٹن کی قاہرہ آمد ایک ایسے موقع پر ہوئی ہے جب دوروز قبل صرف ایک دن میں کم از کم 72 مظاہرین مارے گئے ہیں ۔ مصر کے عبوری نائب صدر کے مطابق'' کیتھرائن آشٹن عبوری صدر عدلی منصور اور عبوری نائب صدر البرادعی سے ملاقات کریں گی۔ '' تاہم ابھی اخوان المسلمون کے رہنماوں سے ملاقات کی تصدیق نہیں ہوئی۔