سعودی وزیر داخلہ اور شہریوں کے درمیان "ویڈیو کانفرنس" رابطے کی سہولت

ریاض اور جدہ میں رابطہ سینٹر قائم کر دیئے گئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی وزارت داخلہ نے وزیر داخلہ اور شہریوں کے درمیان رابطے کے لیے جدید طریقے استعمال کرتے ہوئے"ویڈیو کانفرنس" کی رابطے کی سہولت فراہم کی ہے۔ وزیر داخلہ شہزادہ محمد بن نائف بن عبدالعزیز تک عوامی شکایات اور تجاویز کو آسان بنانے کے لیے جدہ اور ریاض میں رابطہ سینٹر بھی قائم کیے گئے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق وزیر داخلہ اور عوام کے درمیان ویڈیو رابطے کی سہولت کے استعمال کا فیصلہ حال ہی میں وزارت داخلہ کے ہفتہ واراجلاس میں کیا گیا۔ وزارت داخلہ کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ حکومت نے عوامی شکایات کےازالے کے لیے شہریوں کو ویڈیو کیمرے کے ذریعے رابطے کی سہولت فراہم کی ہے۔

ملک کے دور دراز علاقوں کے مرد و خواتین کے لیے وزیر داخلہ سے براہ راست ملاقات نہیں کر سکتے یا ان کی شکایات فوری طور پر وزیر داخلہ تک نہیں پہنچ پاتی ہیں۔ وزارت داخلہ نے اس مسئلے کا حل یہ نکالا ہے کہ وزیر داخلہ جدہ اور ریاض کے رابطہ سینٹرز میں آنے والے شکایت کنندگان کو آن لائن ویڈیو کے ذریعے سن کران پرعمل درآمد کے فوری احکامات دے سکیں گے۔

وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ جدہ اور ریاض میں قائم رابطہ سینٹرز سے شکایت اور تجاویز کنندگان کو وزیر داخلہ سے ملاقات کا وقت اور ایک نمبر جاری کیا جائے گا، جس پر وہ مخصوص مراکز سے ویڈیو کیمرے کے ذریعے وزیر داخلہ سے مخاطب ہو سکیں گے۔ دارالحکومت ریاض میں قائم رابطہ سینٹر میں اب تک آٹھ ہزار افراد نے رابطے کے لیے خود کو رجسٹر کرایا ہے جبکہ جدہ سینٹر میں یومیہ ایک سو افراد رابطہ کر رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں