آرتھوپیڈک جائے نماز تیار، گھٹنوں کو نماز سے ریلیف ملے گا

اب تک جرمنی، ترکی، دبئی، کویت کے ساتھ ساتھ آن لائن بھی دستیاب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

جرمنی میں مقیم ایک ترک باشندے نے ایک ایسا جائے نماز تیار کیا ہے جس کے باعث گھٹنوں کے درد میں مبتلا افراد بھی مکمل رکوع وسجود کے ساتھ نماز ادا کر سکیں گے۔ منفرد جائے نماز استعمال کرنےسے گھٹنوں کے درد میں بھی نجات مل سکے گی۔

ترک باشندے نے پوری دنیا میں اس جائے نماز کی دستیابی ممکن بنانے کے لیے تیاری کا ذکر کرتے ہوئے کہااس کا تیار کردہ جائے نماز جرمنی میں باضابطہ طور پر 2009 میں رجسٹرڈ کرایا گیا تھا۔ اصل مسلہ اس کی ڈیمانڈ کے مطابق پروڈکشن ممکن بنانا تھا ۔ اب اس کی تیاری ترکی کے تین مختلف شہروں میں جاری ہے، جبکہ ترکی کے علاوہ جرمنی، کویت اور دبئی میں اس کے سیل پوائنٹ کھولے گئے ہیں۔

دس سال کی عمر میں جرمنی آنے والے عدنان پیرسان نے بتایا اب تک تقریباً 3000 مصلے سالانہ کی بنیاد پر فروخت کیے جا چکے ہیں۔ کہ یہ کوشن اور چھوٹے بیگ کی صورت میں تبدیل ہو سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا زیادہ تر مصلوں کی خریداری آن لائن آرڈر سے بھی کی جا رہی ہے۔ یہ جائے نماز ایک خاص قسم کے فوم سے تیار کیا گیا ہے جو کہ ہر قسم کے نقصان سے بچاتا ہے۔

پیرسان نے میڈیا کو بتایا کہ مسلمانوں کے علاوہ کویت،دیگر مذاہب کے لوگوں کی اس مصلہ میں دلچسپی ایک غیرمعمولی بات ہے مگر وہ کاروباری مقاصد کے لیے اس کا جائزہ لے سکتے ہے۔ اخبار نے عدنان کے حوالے سے کہا کہ "میں چاہتا ہوں کہ عبادات ہر ایک کے لیے آسان ہو جائیں، چاہے وہ مسلمان ہوں، پروٹسٹنٹ یا کیتھولک مسلک کے عیسائی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں