.

یمنی وزیر اعظم محمد سالم باسندوہ قاتلانہ حملے میں بال بال بچ گئے

حملہ محمد سالم سندوہ کی دفتر سے گھر واپسی پر کیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے وزیر اعظم محمد سالم باسندوہ ہفتے کے روز ایک ناکام قاتلانہ حملے میں بال بال بچ گئے۔ العربیہ ٹی وی نے باسندوہ کے مشیر علی الصراری کے حوالے سے بتایا ہے کہ وزیر اعظم کے قافلے پر دارلحکومت صنعاء میں حملہ کرنے والے نامعلوم مسلح افراد فائرنگ کے بعد فرار ہو گئے۔

یمنی وزیر اعظم کے سیاسی مشیر علی الصراری نے بتایا کہ صنعاء کی السیاسی کالونی میں شام کے وقت کئے جانے والے قاتلانہ حملے میں کسی فرد کو گزند نہیں پہنچا۔ حملے کے وقت باسندوہ اپنے دفتر سے گھر واپس آ رہے تھے۔

درایں اثناء یمن میں 'العربیہ' کے نمائندے نے وزیر اعظم کے قریبی ذرائع کے حوالے سے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ "تقریبا چار مسلح افراد نے وزیر اعظم کے قافلے میں شامل تین گاڑیوں پر اس وقت فائر کھولا جب وہ دفتر واپسی سے اپنے گھر کے قریب ہی تھے۔"

ذرائع کے مطابق نامعلوم مسلح افراد نے وزیر اعظم کی گاڑی پر چھے گولیاں فائر کیں، جس کے بعد وہ بآسانی فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔ انہوں نے مزید کہا کہ جس جگہ محمد سالم سندوہ پر حملہ کیا گیا وہ ان کے گھر سے چند ہی گز کے فاصلے پر تھی۔