.

ڈیوڈ کیمرون سرکاری ’’سرخ صندوقچہ‘‘ ٹرین میں بھول گئے

شام کی سوچ میں غلطاں برطانوی وزیراعظم کی غیر حاضر دماغی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برطانوی وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون کے اعصاب پر اس وقت شام کا مسئلہ کس طرح چھایا ہوا ہے، اس کا اندازہ اس بات سے کیا جاسکتا ہے کہ وہ لندن سے ایڈنبرا کے لیے سفر کے دوران اپنا سرکاری سرخ صندوقچہ ٹرین میں ہی بھول گئے لیکن اس کو کسی نے ہاتھ نہیں لگایا۔

ڈیلی مرر نے صفحہ اول پر اس سرخ صنوقچے (ریڈ باکس) کی تصویر شائع کی ہے جو ڈیوڈ کیمرون کی نشست کے ساتھ میز پر پڑا ہے۔ اخبار نے لکھا ہے کہ ’’غیر حاضر دماغ کیمرون اسکاٹ لینڈ کے دورے پر تھے۔ وہ سرخ صندوقچے کو اپنی میز پر ہی چھوڑ کر چلے گئے اور اس میں چابی بھی لگی ہوئی تھی۔ اس پر’’وزیراعظم‘‘ کے الفاظ واضح لکھے ہوئے نظر آرہے ہیں۔

اخبار نے لکھا ہے کہ ٹرین کے مسافر دیانت دار تھے اور انھوں نے کیمرون کے بیگ کی جانب دیکھا تک نہیں۔ تاہم ناقدین کو خدشہ ہے کہ اس میں شام کے خلاف ممکنہ خفیہ فوجی آپریشن سے متعلق اہم دستاویزات ہوسکتی تھیں۔

برطانوی وزیراعظم کے دفتر 10 ڈاؤننگ اسٹریٹ کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ڈیوڈ کیمرون کی سکیورٹی ٹیم وہیں موجود تھی اور صندوقچے پر ان کی نظر تھی۔

لیکن اخبار نے اس دعوے کو مسترد کردیا ہے اور برطانوی سیاست دانوں کے حوالے سے لکھا ہے کہ ’’اعلیٰ عہدے داروں کی پبلک ٹرانسپورٹ میں سفر کے دوران حساس اور خفیہ دستاویزات پر کام کرنے کی حوصلہ شکنی کی جاتی ہے۔ اگر ان دستاویزات کو ساتھ لے جانا بہت ہی ضروری ہو تو پھر انھیں چھپا کر لے جایا جانا چاہیے‘‘۔