بھارت: بین الاقوامی ائیر پورٹ کا نیا ریڈار بھی خراب

پروازیں متاثر اور مسافر خوف زدہ ہو گئے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

بھارتی ریاست کیرالہ کے پہلے بین الاقومی ائیر پورٹ کا اٹھارہ برس بعد تبدیل کیا جانے والا نگران ریڈار تنصیب کے فوری بعد خرابی سے دو چار ہو گیا ہے ۔ تروندرم ائیر پورٹ پر پیر کے روز نصب کیے گئے ریڈار پر 1٫6 لاکھ یورو لاگت آئی تھی۔

ریاست کا پہلا بین الاقوامی ائیر پورٹ ہو نے کی وجہ سے بیرون ملک سے آنے والی پروازوں اور بین الاقوامی مسافروں کی وجہ سے مصروف ائیر پورٹ ہے۔ ریڈار سسٹم موسم کے بارے میں تازہ ترین اطلاعات کا ذریعہ ہونے کے علاوہ ائیر ٹریفک کنٹرول کرنے کے حوالے سے بھی اہم ہے ۔ اس کی تنصیب کے فوری بعد خراب ہو جانے کی وجہ مسافروں اور ائیرپورٹ حکام کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ 18 سال پرانے ریڈار کی جگہ لینے والے اس نئے ریڈار کی تنصیب کی منظوری بھارتی سول ایویشن کے ڈائریکٹر جنرل نے دی تھی۔ ائیرپورٹ حکام کے مطابق ریڈار موسم کے بارے میں اہم معلومات دینے میں ناکام ہو گیا ہے جو کہ ایک انتہائی پیچیدہ مسئلے کی شکل اختیار کر گیا ہے۔

اس ریڈار کو نصب کرنے والی جمہوریہ چیک کی کمپنی "ایلڈس پرڈوبس" کے انجینئر اب اس ریڈار میں پیش آںے والے مسئلہ کو ٹھیک کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ ائیرپورٹ اتھارٹی کے ایک اعلیٰ عہدیدار کے مطابق ڈائریکٹر جنرل سول ایوی ایشن کی جانب سے ریڈار کی تنصیب کے لئے جاری کردہ اجازت عارضی تھی اور اب اس ریڈار کو مختصر دورانیے کے بعد چیک کرنا پڑے گا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ بین الاقوامی ائیر پورٹ ہونے کی وجہ سے پوری دنیا میں بھاری سول ایشن کی بدنامی ہو رہی ہے، تاہم متعلقہ حکام کی جانب سے ابھی تک تحقیقات کو حکم نہیں دیا گیا ہے ۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں