سعودی خواتین پراپرٹی کے کاروبار میں بھی شانہ بشانہ

معاشرہ خواتین کے بارے میں اپنی سوچ تبدیل کرے: فاتین ابراش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب میں پراپرٹی کے کاروبار میں خواتین بھی نمایاں طور پر شامل ہو گئی ہیں۔ آج سے دس سال پہلے خواتین کی اس بزنس میں موجودگی شاز و نادر ہی تھی۔ اس اہم کاروباری شعبے میں سعودی خواتین کے آنے کا ذریعہ بننے والی مکہ کی رہائشی فاتین ابراش کا کہنا ہے کہ '' پرپرٹی کے شعبے میں سعودی خواتین مارکیٹنگ کے علاوہ خرید و فروخت کے معاہدوں کو حتمی شکل دینے تک کے مراحل میں اہم کردار ادا کر رہی ہیں۔''

سعودی عرب جہاں خواتین کا عملی زندگی کردار گزشتہ دہائیوں کے مقابلے میں نمایاں ہو رہا ہے اب پراپرٹی کی خرید و فروخت کے کاروبار میں بھی سرگرم نظر آنے لگی ہیں۔ مکہ کی رہائشی فاتین ابراش نے دس سال قبل اس شعبے میں قدم رکھا تو اس وقت خواتین کو اس کاروبار کا حصہ بننے کیلیے لائسنس بھی جاری نہیں کیے جاتے تھے۔ لیکن فاتین ابراش نے ہمت نہ ہاری اور میدان میں موجود رہ کر اس شعبے کی جزئیات تک کو سمجھنے اور مہارت پیدا کرنے میں مصروف رہیں۔

ان کا کہنا ہے '' جب میں نے اس شعبے میں قدم رکھا تو ہم محض چند خواتین اس بزنس سے متعلق تھیں ،اس وجہ سے کافی مشکلات کا سامنا کرنا پٰڑا، لیکن ہم نے سخت محنت کی اور مشکلات پر قابو پالیا۔'' انہیں امید ہے کہ پراپرٹی کے کاروبار میں موجود خواتین کی ایک یونین بنے گی اور خواتین بھی اس شعبے میں زیادہ بھر پور کردار ا ادا کر سکیں گی ۔

فاتین ابراش کا کہنا ہے کہ ''معاشرے کو خواتین کے بارے میں اپنی سوچ میں تبدیلی لانی چاہیے، کسی پراپرٹی کی خریدو فروخت میں خواتین کا حصہ بعض اوقات 90 فیصد سے بھی زیادہ ہوتا ہے ۔''

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں