ایران نے شام میں ہر منتخب صدر کی حمایت کا اعلان کر دیا

روحانی نے پہلی بار ایران کے عمومی موقف سے ہٹ کر بات کی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

بشار الاسد کے اتحادی ایران کے صدر حسن روحانی نے کہا ہے کہ ان کا ملک شام میں جمہوری طریقے سے منتخب ہونے والے ہر حکمران کو تسلیم کرے گا۔ ان کا کہنا تھا '' اہل شام جس کسی کو بھی ووٹ کے ذریعے حق حکمرانی دیں گے ہم ان سے اتفاق کریں گے۔''

ایرانی صدر کا یہ تازہ بیان ایرانی لیڈروں کے عمومی موقف سے قدرے ہٹ کر ہے۔ نیز ان کا یہ بیان ایسے ماحول میں آیا ہے جب یہ ثابت ہو گیا کہ شام میں کیمیائی ہتھیاروں کا استعمال ہوا ہے۔ ایران کا موقف رہا ہے کہ مغربی ممالک بشارالاسد کے خلاف اپوزیشن کی مدد کرتے ہیں۔

واضح رہے شام کی حکومت 2014 میں صدارتی انتخاب کا ارادہ رکھتی ہے، لیکن اپوزیشن خانہ جنگی کے ماحول میں صدارتی انتخاب کا انعقاد ممکن نہیں دیکھتی ہے۔ اپوزیشن کے تمام گروپ بشارالاسد کے ساتھ کسی بھی قسم کے مذاکرات کے حق میں نہیں ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں