.

پاسپورٹوں کی بے توقیری، پاکستان سمیت سات مسلم ممالک سر فہرست

عرب دنیا کے امیر ممالک کے پاسپورٹوں کی ہر جگہ پذیرائی اور عزت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان سمیت مسلم اورعرب دینا کے سات ممالک ان دس ملکوں میں شامل ہیں جن کے پاسپورٹوں کی پوری دنیا حتی کہ دوست اور اتحادی سمجھے جانے والے ملکوں میں بھی ناقدری کی جاتی ہے ان ممالک کے پاسپورٹ رکھنے والوں کو بیرون ملک سفر کے بھاری اخراجات برداشت کرنے کے ساتھ ساتھ اذیت، ذلت اور توہین آمیز سلوک کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

ان ملکوں میں افغانستان اور فلسطینی اتھارٹی کی طرح اکثریت ان ملکوں کی ہے جن کے شہری امریکا اور اسرائیل کے بارے میں ایک خاص سوچ رکھتے ہیں یا ان ملکوں کے باسی عام طور پر دوسرے ملکوں میں سرمایہ کاری یا تفریحی مقاصد کے بجائے روزگار کی تلاش میں جاتے ہیں۔

دلچسپ بات ہے کہ شام اور لیبیا ایسے ملکوں کے پاسپورٹوں کی حالت بھی ان ممالک کے مقابلے میں بہتر ہے۔

سب سے زیادہ عزت جن ملکوں کے پاسپورٹ کے حامل شہریوں کو دنیا میں عزت ملتی ہے ان میں سعودی عرب، متحدہ عرب امارات اور بعض دیگر شامل ہیں۔

ان حقائق سے حال ہی میں ہینلی اینڈ پارٹنرزویزا ریٹکشنزانڈیکس کی طرف سے سامنے لائی گئی ایک رپورٹ میں کیا گیا ہے۔ رپورٹ کے مطابق دس ممالک جن کے شہریوں کی آمدورفت کو سب سے زیادہ ناپسند کیا جاتا ہے ان میں افغانستان،عراق،صومالیہ،پاکستان، فلسطین اتھارٹی، اریٹیریا، سوڈان، لبنان اور سری لنکا شامل ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مذکورہ بالا ملکوں کے شہریوں کو دوسرے ملکوں میں آتے جاتے ہوئے انتہائی کم آزادی اور سہولت کا ماحول فراہم ہوتا ہے۔ ان ملکوں کے مقابلے میں نسبتا خوشحال ملک لیبیا اور شام کے شہریوں کو کم پریشانیوں اور باز پرس کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

ایسے ممالک جن کے پاسپورٹ دنیا میں خوشگواری سے دیکھے جاتے ہیں ان میں سعودی عرب سمیت عرب دنیا کے امیر ممالک اور خلیجی ممالک بھی شامل ہے۔ سعودی عرب کے پاسپورٹ رکھنے والوں کو مشکلات کے سامنے کے حوالے سے جس درجے پر دکھایا گیا ہے وہ 64 واں ہے۔ اومان کی اس حوالے سے پوزیشن مزید ایک درجہ بہتر ہے، مراکش، الجزائر اور مصر کی اس معاملے میں پوزیشن بالترتیب 75 ویں ، 79ویں اور 79 ویں ہے۔