کار میں اجنبی کے ساتھ سفر:سوڈانی خاتون کو کوڑے پڑ گئے

عوامی مقام پر شائستگی کے قانون کی خلاف ورزی پر خاتون کو سرعام سزا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سوڈان میں ایک خاتون کو اجنبی مرد کے ساتھ کار میں سفر کے الزام میں سرعام کوڑے مارے گئے ہیں اور اس کو کوڑے مارے جانے کی ویڈیو کی میڈیا کے ذریعے خوب تشہیر کی جارہی ہے۔

فوٹیج میں عورت فرش پر بیٹھی ہوئی ہے اوروہ کوڑے پڑنے کے بعد درد کی شدت سے کراہ رہی ہے۔اس کو ایک پولیس اہلکار پشت پر سرعام کوڑے ماررہا ہے اور ایک مجمع اس سارے منظر کو ملاحظہ کررہا ہے۔

یہ خاتون زمین پر بیٹھی ہوئی ہے اور وہ گلابی رنگ کے اپنے دوپٹے سے سر کو ڈھانپنے کی بار بار کوشش کرتی ہے لیکن دوپٹہ ہر مرتبہ سر سے سرک جاتا ہے۔ڈیلی میل میں شائع شدہ رپورٹ کے مطابق اس ویڈیو کے بارے میں خیال کیا جاتا ہے کہ یہ سوڈانی دارالحکومت خرطوم میں فلمائی گئی ہے۔

پولیس افسر خاتون کو کوڑے مارتے ہوئے یہ بھی کہہ رہا ہے کہ اس کو کار میں اور وہ بھی فرنٹ سیٹ پر نہیں بیٹھنا چاہیے تھا۔یہ ویڈیو کلپ 39 سیکنڈز کا ہے اور پولیس افسر اس خاتون کو خبردار کررہا ہے کہ ''یہ سزا اس لیے ہے تاکہ تم مزید کار میں نہ بیٹھو''۔

واضح رہے کہ سوڈان کے فوجداری ایکٹ کی دفعہ 152 کے تحت امن عامہ کا قانون پولیس کوعوامی مقامات پر شائستگی کی خلاف ورزی کی مرتکب خواتین کو کوڑے مارنے کا اختیار دیتا ہے۔یہ قانون جنرل عمرحسن البشیر کے 1989ء میں فوجی انقلاب کے نتیجے میں برسراقتدار آنے اور پھر ملک کا صدر منتخب ہونے کے بعد نافذالعمل ہوا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں