بحری جہازوں کے ذریعے 20 ہزارعازمین حج کی سعودی عرب آمد

بندرگاہوں پرحجاج کی سہولت کے لیے غیرمعمولی انتظامات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

حج کے دن قریب آتے ہی سعودی عرب میں فضائی، بحری اور بری راستوں سے آنے والے عازمین حج کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔ جدہ اسلامی بندرگاہ کے ڈائریکٹر ساھر طحلاوی کا کہنا ہے کہ رواں سال بحری راستے سے کم سے کم بیس ہزار عازمین حج کی آمد متوقع ہے۔

العربیہ ٹی وی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے مسٹر طحلاوی نے کہا کہ مختلف ملکوں کی جانب سے انہیں بحری راستوں سے عازمین حج کو روانہ کرنے کے حوالے سے مطلع کر دیا گیا ہے۔ جدہ سمیت بعض دوسری بندرگاہوں پر کم سے کم 40 بحری جہازوں سے عازمین حج سعودی عرب پہنچیں گے۔

ایک سوال کے جواب میں جدہ پورٹ کے عہدیدار کا کہنا تھا کہ انہوں نے بیس ہزار عازمین حج کے استقبال کی تیاریاں کی ہیں۔ بندرگاہوں پر پہنچتے ہی عازمین حج کو ان کی اگلی منزل تک پہنچانے اور ان کی خدمت کا عمل شروع کر دیاجاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ بندرگاہوں پر پہنچنے والے غیرملکی عازمین حج کو وہاں انتظار نہیں کرنا پڑتا بلکہ چند منٹوں کے اندر اندر حجاج اپنی منزل کی جانب روانہ کردیے جاتے ہیں۔

پچھلے کچھ سال سے سمندری راستے سے سعودی عرب حج کے لیے آنے والوں کی تعداد میں بتدریج کمی آئی ہے لیکن امسال سوڈان سمیت کئی ملکوں کے باشندے بحری راستے ہی سے حج پرآ رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں