الجزائرکا چار پڑوسی ملکوں سے متصل سرحدیں بند رکھنے کا فیصلہ

فیصلہ سیکیورٹی وجوہات کی بنا پر کیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

افریقی ملک الجزائر نے چار پڑوسی ملکوں مالی، ناٰئجیریا، موریتانیہ اور لیبیا سے متصل سرحدیں سیکیورٹی وجوہات کی بنا پرغیرمعینہ مدت کے لیے بند رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

الجیرین وزیراعظم عبدالمالک سلال نے ریاست تمنراست میں مقامی عمائد کے ایک وفد سے گفتگو کے دوران کہا کہ ملک کے جنوبی سرحد پر واقع صحارا کے چار پڑوسی ممالک کی طرف سے خطرات لاحق ہیں جس کے باعث ان چاروں سے متصل سرحدیں بند رکھی جائیں گی۔

وزیراعظم نے کہا کہ جب تک سرحدوں پر حالات بہتر اور سیکیورٹی کے حوالے سے پائے جانے تمام خدشات دورنہیں ہو جاتے تب تک ان پڑوسی ملکوں سے سرحدیں نہیں کھولی جائیں گی۔ اس میں زیادہ وقت بھی لگ سکتا ہے۔

الجزائر کی سرکاری خبررساں ایجنسی کے مطابق وزیراعظم سلال کا کہنا تھا کہ لیبیا، ناٰئجیریا، مالی اور موریتنا کی جانب سے تخریب کاروں کی دراندازی کے خطرات ہیں جو ہماری سرزمین میں داخل ہو کر امن وامان کے مسائل پیدا کر سکتے ہیں۔ مالی کی جانب سے خاص طور پرخطرہ ہے کیوں کہ وہاں پر جاری شورش کے اثرات الجزائر پڑ رہے ہیں۔

جب ان سے پوچھا گیا کہ اگرسرحدیں کھولنے کی ضرورت محسوس کی گئی تواس کا فیصلہ کون کرے گا؟ تو وزیراعظم عبدالمالک سلال نے کہا کہ عارضی طورپرسرحدیں کھولنے کا فیصلہ صدر ہی کریں گے تاہم سرحدیں کھولنے کے بعد حساس سرحدی علاقوں میں فوج کی نفری بڑھانا پڑے گی۔ مسلح افواج کے ساتھ مشاورت کے بعد ان پڑوسی ملکوں سے مہینے میں دو دن کے لیے سرحدیں کھولی جا سکتی ہیں۔

خیال رہے کہ لیبیا میں کرنل معمرقذافی کے خلاف بغاوت کے بعد سے الجزائر نے اپنی سرحد پرسیکیورٹی اہلکاروں کی تعداد میں غیرمعمولی اضافہ کر دیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں