.

حوثی قبائل سلفیوں کے خلاف لڑائی میں مشروط جنگ بندی پر آمادہ

یمن میں ہونے والی گولہ باری میں چار شدت پسند ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے شمالی علاقوں میں حوثی قبائل اور سلفی مسلک کے پیروکار شدت پسندوں کے درمیان لڑائی جاری ہے۔ ادھر یمنی ایوان صدر کی کوشش کے بعد حوثیوں نے دماج کے علاقے میں سلفیوں کے ساتھ اس شرط پر سیز فائر پر آمادگی ظاہر کی ہے کہ سلفی پہاڑی علاقوں سے نکل جائیں گے۔

العربیہ ٹی وی کے ذرائع کے مطابق صنعاء حکومت کی جانب سے متحارب دھڑوں کے درمیان صلح کے لیے بھیجی گئی ایک کمیٹی شورش زدہ شہر دماج میں پہنچ گئی ہے جہاں اس نے حوثیوں کے ساتھ مذاکرات بھی کیے ہیں۔ حوثی قبائل کا کہنا ہے کہ سلفی علاقہ چھوڑ دیں توان پرحملے روک دیے جائیں گے۔

مصالحتی کوششوں کے باوجود متحارب گروپوں کے درمیان حملے بھی جاری ہیں۔ اتوار کے روزحوثیوں کی جانب سے دماج کے مختلف علاقوں میں سلفیوں کے ٹھکانوں پر توپخانے سے گولہ باری کی گئی جس کے نتیجے میں کم سے کم چار سلفی شدت پسند ہلاک ہوگئے تھے۔