بحرین:سعودی عرب سے داخل ہونے والے دو مشتبہ دہشت گرد گرفتار

دونوں خلیجی شہری ہیں اور ماضی میں گوانتاناموبے میں قید رہ چکے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

خلیجی ریاست بحرین میں حکام نے دہشت گردی کے حملوں کی سازش کے الزام میں دو خلیجی عرب شہریوں کو گرفتار کر لیا ہے۔

بحرین کی وزارت داخلہ نے ایک بیان میں بتایا ہے کہ ان دونوں مشتبہ افراد کو سعودی عرب سے جعلی پاسپورٹس کے ذریعے بحرینی علاقے میں داخل ہونے پر گرفتار کیا گیا تھا اور ان کے قبضے سے بھاری مقدار میں نقد رقم برآمد ہوئی ہے۔

ابتدائی تحقیقات کے مطابق دونوں گرفتار خلیجی عرب شہری ماضی میں امریکا کے بدنام زمانہ عقوبت خانے گوانتا ناموبے میں قید رہ چکے ہیں۔ان پر شُبہ ہے کہ وہ بحرین کی سلامتی کو تباہی سے دوچار کرنے کے لیے دہشت گردی کی کارروائی کی منصوبہ بندی کررہے تھے۔

تاہم وزارت داخلہ کے بیان میں یہ واضح نہیں کیا گیا کہ وہ کس قسم کی دہشت گردی کی کارروائی کرنے جارہے تھے۔دونوں کی مکمل شناخت بھی نہیں بتائی گئی۔

واضح رہے کہ بحرین میں امریکا کا پانچواں بحری بیڑا موجود ہے۔اس کی حکومت کے خلاف گذشتہ کئی ماہ سے احتجاجی مظاہرے جاری ہیں اور مظاہرین حکومت سے جمہوری اصلاحات متعارف کرانے کا مطالبہ کررہے ہیں۔فروری 2011ء میں حکومت مخالفین نے ریاست میں بغاوت برپا کرنے کی کوشش کی تھی لیکن بحرین سعودی عرب کی مدد سے اس بغاوت کو کچلنے میں کامیاب رہا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں