تیونس:مظاہرین نے النہضہ کا دفتر نذرآتش کردیا

تین شہروں میں غربت ،بے روزگاری اور پسماندگی کے خلاف عام ہڑتال اور مظاہرے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

تیونس میں بدتر معاشی حالات کے خلاف ایک مرتبہ پھر احتجاجی مظاہرے شروع ہوگئے ہیں اور دارالحکومت تیونس سے 130 کلومیٹر جنوب مغرب میں واقع شہر سلیانۃ میں مظاہرین نے حکمراں اسلامی جماعت النہضہ کے دفتر کو نذرآتش کردیا ہے۔

تیونس کے شمال مغربی شہر سلیانۃ اور جنوب مغربی ساحلی علاقے میں واقع شہروں قفصہ اور قابس میں بدھ کو ابتر معاشی حالات کے خلاف احتجاج کے لیے عام ہڑتال کی گئی ہے اور مظاہرین نے اس علاقے میں حکومت سے زیادہ سرمایہ کاری کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

تیونس کی سرکاری خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق سلیانۃ میں عام ہڑتال کی کامیابی کی شرح نوے فی صد رہی ہے اور شہر میں احتجاجی مظاہرے کے دوران تشدد کا واقعہ اس وقت رونما ہوا جب بعض مظاہرین نے پولیس کی جانب پتھراؤ کیا اور اس کے جواب میں پولیس اہلکاروں نے بھی مظاہرین پر پتھراؤ کیا۔

اس کے بعد مظاہرین نے النہضہ کے مقامی دفتر پر دھاوا بول دیا۔انھوں نے دفتر سے فائلیں اور فرنیچر نکال کر اور انھیں سڑک پر رکھ آگ لگادی۔انھوں نے آگ بجھانے والے عملے کو جلتی ہوئی عمارت کے نزدیک جانے سے روک دیا۔

قفصہ میں بھی غربت ،بے روزگاری اور پسماندگی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔واضح رہے کہ تیونس کے ان شہروں کے علاوہ سیدی بوزید میں دسمبر 2010ء اور 2011ء میں سابق مطلق العنان صدر زین العابدین بن علی کی حکومت کے خلاف احتجاجی مظاہروں کا آغاز ہوا تھا اور ایک ماہ سے بھی کم عرصے میں ان کی حکومت جاتی رہی تھی۔

تیونس میں بعداز انقلاب اکتوبر 2011ء میں منعقدہ عام انتخابات کے نتیجے میں اسلامی جماعت النہضہ نے اکثریت حاصل کی تھی اور اس نے دو سیکولر جماعتوں کے ساتھ مل کر حکومت بنائی تھی لیکن ان کی حکومت گذشتہ دو سال کے دوران اپنے انتخابی وعدوں کو پورا کرنے اور ملک سے غربت اور بے روزگاری کے خاتمے میں ناکام رہی ہے۔

النہضہ کی سربراہی میں حکومت کے خلاف گذشتہ مہینوں سے احتجاجی مظاہرے جاری ہیں جس کے بعد اس جماعت کی قیادت نے حزب اختلاف کے ساتھ مذاکرات میں اقتدار چھوڑنے اور ٹیکنوکریٹ پر مشتمل عبوری کابینہ کے قیام پر اتفاق کیا تھا لیکن ابھی تک اس حکومت کے سربراہ عبوری وزیراعظم کے نام پر فریقین کے درمیان اتفاق رائے نہیں ہوسکا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں