.

آٹھ ماہ میں سعودیوں کے لیے روزگار کے ڈھائی لاکھ مواقع پیدا ہوئے

غیر قانونی تارکین وطن کے خلاف آپریشن کے مثبت نتائج

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے وزیر برائے محنت وافرادی قوت نے بتایا ہے کہ ملک میں موجود غیر قانونی تارکین وطن کی دستاویزات درستی مہم کے آٹھ ماہ کے عرصے میں دو لاکھ پچاس ہزار سعودی باشندوں کومختلف شعبوں میں ملازمتیں فراہم کی گئی ہیں۔

سعودی عرب کی سرکاری خبر رساں ایجنسی "واس" کے مطابق مشرقی شہر الخبر میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر محنت انجینیئر عادل فقیہ کا کہنا تھا کہ غیرملکیوں کی سفری دستاویزات کی درستی کی آٹھ ماہ کی مہلت کے دوران حکومت نے سعودی عرب کے اڑھائی لاکھ افراد کو ملازمتیں فراہم کی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ وزارت محنت وافرادی قوت جلد ہی سعودی شہریوں کو دی جانے والی ملازمتوں کی تفصیلات جاری کرے گی۔

سعودی وزیر کا کہنا تھا کہ غیر قانونی طور پر مقیم تارکین وطن کو ڈی پورٹ کرنے کا آپریشن کامیابی کے ساتھ جاری ہے۔ اس آپریشن کے نتائج بھی جلد عوام کے سامنے لائے جائیں گے۔