چار سو شامی باشندوں کو سعودی عرب چھوڑنے کا حکم

شامی شہری حج کے بعد وطن واپس نہیں لوٹے تھے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی حکومت نے حج کی غرض سے آئے چار سو شامی حجاج کو جلد از جلد ملک چھوڑنے کا حکم دیا ہے۔ سعودی وزارت حج کے سیکرٹری حاتم قاضی کا کہنا ہے کہ حج کے لئے آنے والے چار سو شامی باشندوں کے بارے میں انہیں معلوم ہوا ہے کہ وہ اپنے ملک واپس نہیں لوٹے ہیں۔ حکومت نے ان سے کہا ہے کہ وہ جلد از جلد اپنے ملک چلے جائیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ نے سیکرٹری حج حاتم قاضی کے حوالے سے بتایا ہے کہ رواں سال حج کی غرض سے آنے والے نو ہزارغیر ملکی شہری ابھی تک سعودی عرب میں ٹھہرے ہوئے ہیں اور وہ وطن واپس نہیں گئے۔ حکومت ان تمام غیر ملکی حجاج کو واپس ان کے ملکوں کو بھجوانے کی کوششیں کر رہی ہے۔

حاتم قاضی کا کہنا ہے کہ حج کے بعد سعودی عرب میں ٹھہرنے والے غیر ملکی شہریوں میں سے بعض علاج کی غرج سے رک گئے تھے، جبکہ درجنوں افراد کو سیکیورٹی وجوہات کی بنا پر حکام نے خود ہی روک لیا تھا۔

سعودی وزارت حج کے عہدیدار نے بتایا کہ مناسک حج کے اختتام کے بعد 55 ہزار معتمرین بیرون ملک سے سعودی عرب پہنچ چکے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ بیرون ملک سعودی سفارتی عملے کی مثالی کوششوں اور تعاون کے نتیجے میں معتمرین کی تعداد میں خاطر خواہ اضافہ ہوا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں