.

یورپی پارلیمنٹ کیلیے امیدوار کا تارکین وطن کی آمد روکنے پر زور

تارکین کی آمد و رفت جرائم پیشہ نیٹ ورکس کا کاروبار بن چکا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یورپی پارلیمنٹ کی ایک امیدوار نے یورپی ممالک میں ہونے والی امیگریشن کو مکمل طور پر روکنے پر زور دیا ہے۔ اس امر کا اظہار کلارا سمکووا نے اپنے جاری کیے گئے ایک بیان میں کیا ہے۔ ان کا کہنا ہے ''ہم تارکین وطن سے یورپی یونین کو ہمیشہ محفوظ رکھیں گے۔''

امیدوار کے مطابق ''تارکین وطن کی آمد ایک حقیقی مسئلہ ہے، آپ اس پر بات کر سکتے ہیں، آپ تمام چاہتے ہیں لیکن مدد نہیں کر پاتے، اس لیے افسوس کے ساتھ یہ کہنا ہے کہ تمام یورپی ملک صاف کہہ دیں کہ تارکین وطن نہیں چاہییں۔'' ان کے مطابق ''ایسا کرنے سے یورپی یونین میں شامل جنوبی ممالک کو بطور خاص فائدہ ہو گا۔''

یورپی امیدوار نے کہا ہم یہاں تارکین وطن کی صورت میں مذہبی انتہا پسندوں کو نہیں چاہتے۔ واضح رہے یورپی ترجمان خود کو اصلا رومانیہ کی شہری کہتی ہیں لیکن ان کی پارٹی کی سربراہ تومیو اوکامورا نے پیر کے روز ان کے رومانیہ سے تعلق کو چیلنج کیا تھا۔

کلارا سمکورا کا کہنا ہے کہ تارکین وطن کی آمد جرائم پیشہ عناصر کا من پسند کاروبار بن چکا ہے۔ اگر ان کے بارے میں برداشت کی پالیسی چھوڑ دی جائے تو جرائم پیشہ عناصر کا کاروبار بند ہو جائے گا۔