.

برطانوی وزیر کی غلافِ کعبہ کی تیاری کے عمل میں شرکت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے دورے پر آئی ہوئی پاکستانی نژاد برطانوی وزیر سعیدہ وارثی نے غلافِ کعبہ (کسوہ) کی تیاری کے عمل میں شرکت کی ہے اور انھوں نے بھی ریشمی کپڑے سے تیار کیے جانے والے غلاف پر کشیدہ کاری کی کوشش کی ہے۔

بیرونس سعیدہ وارثی برطانوی دفتر خارجہ کی سینیر وزیر مملکت ہیں اور عقیدے اور کمیونیٹیز کے امور کی وزیر ہیں۔ وہ عمرہ کی ادائی کے سلسلہ میں سعودی عرب کے سرکاری دورے پر ہیں۔ انھیں بدھ کو کسوہ فیکٹری کے دورے کے موقع پر کعبۃ اللہ کے غلاف کی تیاری کے عمل کی تاریخ اور اس میں اب تک ہونے والی پیش رفت کے بارے میں تفصیل سے آگاہ کیا گیا۔

سعیدہ وارثی نے بعد میں ٹویٹر پر ایک پوسٹ میں لکھا ہے کہ انھیں حج 2014ء کے لیے غلافِ کعبہ کی تیاری کے عمل میں شرکت کا سنہری موقع ملا ہے۔انھوں نے لکھا ہے کہ وہ عمرہ ادا کرنے کے لیے سعودی عرب کے سرکاری دورے پر ہیں۔اس موقع پر انھوں نے یہ بات نوٹ کی ہے کہ مکہ معظمہ میں برطانوی فرموں کے لیے بہت سے مواقع موجود ہیں۔

انھوں نے مزید لکھا کہ ''انھیں برطانوی فرم پی بی ورلڈ کو مکہ کے انفرااسٹرکچر پروگرام کی معاونت کے لیے بڑا ٹھیکا حاصل کرنے پر بڑی خوشی ہوئی ہے''۔

واضح رہے کہ برطانیہ کی انجینیرنگ کنسلٹینسی فرم پارسنز برنکرہوف کو گذشتہ سال مکہ کے نئے پبلک ٹرانسپورٹ پروگرام کا ٹھیکا ملا تھا۔اس منصوبے کے تحت مکہ میں ایک بڑے بس نیٹ ورک کے لیے نئی میٹرولائن تعمیر کی جائے گی۔