.

اسلام کے تاریخی میدان جنگ کو محفوظ بنانے کا فیصلہ

ضعیف العقیدہ لوگوں کی تعلیم وتربیت کا انتظام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی حکومت نے مملکت میں موجود تاریخی اوراسلامی تاریخ کی اہم غزوات کے میدان جنگ کے تحفظ اور ان کی تعمیر نو کا فیصلہ کیا ہے۔

محمکہ سیاحت کے چیئرمین شہزادہ سلطان بن سلیمان نے الاحساء شہر میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ خادم الحرمین الشریفین شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز نے ملک میں موجود جنگوں کے تاریخی مقامات کی حفاظت اور ان کی تعمیر نو کا حکم دیا ہے۔ خادم الحرمین الشریفین اور ولی عہد شہزادہ سلمان بن عبدالعزیز کے احکامات کی روشنی میں مقام بدر، احد، خندق اور دیگر تاریخی میادین جنگ کی ڈویلپمنٹ کی جا رہی ہے

شہزادہ سلطان بن سلمان کا کہنا تھا کہ محکمہ سیاحت مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ کی لوکل گورنمنٹ کے تعاون سے تاریخی مقامات کی تعمیرو ترقی اور ان کی حفاظت کے منصوبوں پر عمل پیرا ہے۔ انہوں نے کہا کہ غزوات اور تاریخی جنگی مقامات کے علاوہ غارحراء جیسے سیاحتی مقامات کی صفائی اوراس کی طرف جانے والے راستوں کو کشادہ کیا جا رہا ہے۔

شہزادہ سلطان نے کہا کہ بیرون ملک سے آنے والے سیاحوں میں سے بعض ضعیف الاعتقاد لوگ بھی شامل ہوتے ہیں۔ ہم نے ان کی رہنمائی کے لیے بھی خصوصی دینی تعلیم کا اہتمام کیا ہے۔ یہ دینی تعلیم سیاحتی مقامات قریب ہی دی جائے گی تاکہ عوام الناس تک دین حنیف کی حقیقی تعلیمات پہنچائی جا سکیں۔