.

الجزائری لڑکیاں ابو سیاف گروپ کے چنگل سے فرار میں کامیاب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فلپائن میں سرگرم ابو سیاف نامی عسکریت پسند گروپ کے چنگل میں پھنسی الجزائر کی دو سگی بہنوں لینڈا اور نجوا باٹسیل کی آٹھ ماہ بعد فرار کی کوشش کامیاب ہو گئی۔

فلپائنی کوسٹ گارڈ پولیس چیف کرنل خوزی سینابری نے میڈیا کو بتایا کہ دونوں سگی بہنوں کو ابو سیاف کے عسکریت پسندوں کی جانب سے یرغمال بنائے جانے کے بعد جزیرہ جولو کے "باتکول" قصبے میں رکھا گیا تھا۔

الجزائری اخبار "الخبر" کی رپورٹ کے مطابق فلپائن اور الجزائر کی دُہری شہریت رکھنے والی دونوں سگی بہنیں کچھ عرصہ قبل ایمنسٹی انٹرنیشنل کی اسائمنٹ پر ایک ڈاکومینٹری فلم کی تیاری کے سلسلے میں ابو سیاف کے زیر انتظام پہاڑی علاقے میں داخل ہوئی تھیں، جنہیں ابو سیاف کے غنڈہ گردوں نے اغواء کر لیا تھا۔ دونوں بہنیں فلپائن میں صحافت کی تعلیم حاصل کر رہی تھیں۔ اس دوران انہیں انسانی حقوق کی تنظیم نے غریب خاندانوں کے مسائل پر ایک مشترکہ دستاویزی فلم کی تیاری کا کہا تھا۔

سفر کے دوران اُنہیں ابو سیاف کے دس عسکریت پسندوں نے اغواء کر کے نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا تھا۔ ابو سیاف کی جانب سے دونوں بہنوں کی رہائی کے بدلے بھاری تاوان طلب کیا گیا تھا۔ تاہم تاوان کی فراہمی سے قبل ہی دونوں فرار میں کامیاب ہوگئی ہیں۔

خیال رہے کہ ابو سیاف گروپ فلپائن میں سرگرم ایک جہادی تنظیم "مورو فرنٹ" سے علاحدہ ہونے والے عناصر نے قائم کیا تھا۔"مورو فرنٹ" عبدالرزاق ابو بکر جنجلانی المعروف ابو سیاف نے 1991ء میں قائم کیا تھا۔