.

سلامتی کونسل ناکام ہوئی تو جنرل اسمبلی سے رجوع کرینگے: یوکرین

چند دن سلامتی کونسل کے فیصلے کا انتظار کریںگے: یوکرینی سفیر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یوکرین میں روسی مداخلت کے معاملے پر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل یوکرین کے مسئلے پر بٹی رہی تو یوکرین حکومت جنرل اسمبلی سے رجوع کر سکتی ہے۔ یہ بات یوکرین کے سفیر نے ایک عالمی خبر رساں ادارے سے بات کرتے ہوئے کہی ہے۔

سفیر کے مطابق'' یوکرینی حکومت اس سلسلے میں انتظار کر رہی ہے کہ سلامتی کونسل آئندہ چند دنوں میں اپنا کردار کس طرح ادا کرتی ہے۔ '' یوکرینی سفیر کا مزید کہنا تھا '' اگر سلامتی کونسل میں ڈیڈ لاک پیدا ہو گیا تو ایسی صورت میں جنرل اسمبلی ''امن کے لیے متحد'' ہونے کی پر وویژن کے تحت اپنا خصوصی اجلاس بلا سکتی ہے۔''

روس سلامتی کونسل میں ویٹو کا اختیار رکھنے کی وجہ سے اقوام متحدہ کے سب سے طاقتور ادارے کو بلاک کر سکتا ہے۔ اس اثناء میں پینٹا گان کے اندازے کے مطابق روس کے تقریبا 20000 فوجی کریمیا میں موجود ہیں۔

روسی صدر ولادی میر پیوٹن اس امر کی تردید کرتے ہیں کہ ان کی افواج یوکرین میں ہیں۔ مغربی ممالک روس کے اس بارے میں دعووں سے متفق نہیں ہیں۔ عام روایت یہ ہے کہ سلامتی کونسل کسی معاملے پر متفق نہ ہو سکے تو جنرل اسمبلی اس عالمی اہمیت کے معاملے پر ووٹنگ کا اہتمام کرتی ہے۔